سیکیورٹی خدشات ,لاہور ہائی کورٹ کے داخلی راستوں پر بائیو میٹرک سسٹم کی تنصیب شروع

سیکیورٹی خدشات ,لاہور ہائی کورٹ کے داخلی راستوں پر بائیو میٹرک سسٹم کی تنصیب ...
سیکیورٹی خدشات ,لاہور ہائی کورٹ کے داخلی راستوں پر بائیو میٹرک سسٹم کی تنصیب شروع

  


لاہور (نامہ نگار خصوصی) دہشت گردی اور سکیورٹی خدشات کے پیش نظر لاہور ہائیکورٹ کے تمام داخلی راستوں پر بائیو میٹرک نظام کی تنصیب کے عمل کا آغاز کر دیا گیا، لاہور ہائیکورٹ بار نے 24ہزار وکلاءکے انگوٹھوں کا ڈیٹا نادرا کے حوالے کر دیاہے۔ دہشت گردی کی موجودہ لہر کی بنائ حساس اداروں کی رپورٹ کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کی عمارت کو انتہائی حساس قرار دیا گیا ہے۔ حصول انصاف کے لئے ہزاروں سائلین اور وکلاءروزانہ لاہور ہائیکورٹ کا رخ کرتے ہیں۔ عدالتی سکیورٹی کے باوجود عدالتوںمیں دہشت گردی کے واقعات ہو چکے ہیں جس کی وجہ سے عدالتوں میں آنے والے سائلین اور وکلاءمیں شدید عدم تحفظ پایا جا رہا ہے۔ عدالتی سکیورٹی کے نظام کو مزید موثر بنانے کے لئے لاہور ہائیکورٹ بار کی جانب سے داخلی راستوں پر بائیو میٹرک نظام متعارف کرانے کے حق میں قرار داد منظور کی گئی تھی۔ اس قرار داد کی روشنی میں نادرا حکام کو24ہزار وکلاءکے انگوٹھوں کے نشانات اور متعلقہ ڈیٹا فراہم کر دیا گیا ہے۔ لاہور ہائیکورٹ بار کے صدر پیر مسعود چشتی نے کہا ہے کہ نادرا کو کمپیوٹر اور بائیو میٹرک مشینیں بھی فراہم کی جا رہی ہیں تاکہ عدالتی سکیورٹی ،وکلاءاور سائلین کے تحفظ کو یقینی بنانے کے اس منصوبے کو جلد پایا تکمیل تک پہنچایا جا سکے۔

مزید : لاہور