لانڈھی ،فیکٹری میں لگی آگ پر11گھنٹوں کے بعد قابو پا لیا گیا

لانڈھی ،فیکٹری میں لگی آگ پر11گھنٹوں کے بعد قابو پا لیا گیا

کراچی(کرائم رپورٹر)کراچی کے علاقے لانڈھی ایکسپورٹ پروسیسنگ زون فیکٹری میں لگی آگ پر11گھنٹوں کی جدوجہدکے بعد قابو پا لیا گیا ہے ، کروڑوں روپے کا سامان جل کر خاکسترہوگیا ، امدادی کارروائیوں میں فائر بریگیڈ کی 13 گاڑیوں،2باؤزر اورایک اسناکل نے حصہ لیاتاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہواہے۔تفصیلات کے مطابق لانڈھی ایکسپورٹ پروسیسنگ زون میں نامعلوم وجوہات کی بنا پر ایک فیکٹری میں آگ لگ گئی جس کے دیکھتے ہی دیکھتے پوری عمارت کو اپنی لپیٹ میں لے لیا واقعے کی اطلاع ملتے ہی فائر بریگیڈ کی دو گاڑیاں جائے حادثے پر پہنچی آگ کی شدت کو دیکھتے ہوئے حکام نے اسے تیسرے درجے کی آگ قرار دیتے ہوئے شہر بھر کے فائر ٹینڈر طلب کرلئے 13 فائر ٹینڈرز، دو باوزر اور ایک اسنارکل نے تقریباً11گھنٹے کی جدوجہدکے بعد آگ پر قابو پالیا۔آتش زدگی کے باعث کسی جانی نقصان اطلاع نہیں ملی ہے ۔چیف فائر آفیسرتحسین احمد نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ آگ لگنے کی اطلاع صبح 4 بجے دی گئی تھی۔فائربریگیڈ حکام کے مطابق لانڈھی ایکسپورٹ پروسیسنگ زون میں گزشتہ رات ایک بجے گارمنٹس فیکٹری میں آگ لگ گئی تھی،تاہم فیکٹری میں کسی کے موجود نہ ہونے کی وجہ سے فائر بریگیڈ حکام کو تاخیر سے آگ کی اطلاع ملی۔فیکٹری میں لگنے والی آگ پر قابو پانے کے لیے فوری طور پر فائرٹینڈرز روانہ کیے،13 فائر ٹینڈرز، 2 واٹر باوزر،ایک اسنارکل نے آگ بجھانے کے عمل میں حصہ لیا ۔آگ لگنے سے فیکٹری میں موجود کروڑوں روپے مالیت کا سامان جل کر خاکستر ہوگیا تاہم کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے،آگ لگنے کی وجوہات بھی تاحال معلوم نہیں ہوسکی ہیں۔فائربریگیڈ حکام کے مطابق فیکٹری میں موجود پرانا سوتی کپڑا بہت بڑی مقدار میں موجود تھا جس کی وجہ سے آگ پر قابو پانے میں مشکلات کا سامنا کرناپڑا۔گودام جلنے سے ڈھائی سو مزدوروں کا روزگار بھی چھن گیا جو شعلوں کو بے بسی سے دیکھتے رہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول