پاکستان اور برطانوی فضائیہ کے سربراہان نے دو مختلف جہازوں میں بیٹھ کر فلائنگ مشن میں حصہ لیا

پاکستان اور برطانوی فضائیہ کے سربراہان نے دو مختلف جہازوں میں بیٹھ کر فلائنگ ...
پاکستان اور برطانوی فضائیہ کے سربراہان نے دو مختلف جہازوں میں بیٹھ کر فلائنگ مشن میں حصہ لیا

  


اسلام آباد(ویب ڈیسک) پاک فضائیہ کا شہرہ آفاق نمبر 9 اسکواڈرن اور برطانیہ کی رائل ایئرفورس کے نمبر 9 اسکواڈرن کو جڑواں قرار دے دیا گیا ہے۔

روزنامہ ایکسپریس کے مطابق پی اے ایف بیس مصحف پر ایک پر وقار تقریب منعقد ہوئی جس میں پاک فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سہیل امان اور برطانیہ کی رائل ایئر فورس کے سربراہ ائیر چیف مارشل سر اسٹیفن جان ہیلیئر بھی شریک تھے۔ تقریب میں دونوں ملکوں کی فضائیہ کے اسکواڈرن نمبر 9 کو جڑواں قرار دیا گیا۔تقریب کے دوران رائل فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سر اسٹیفن جان ہیلیئر نے پاک فضائیہ کے 4 ایف 16 طیاروں کی فارمیشن کا فلائی پاسٹ دیکھا، جس کے بعد طیاروں نے ائیروبیٹکس کا شاندار مظاہرہ بھی کیا۔ اس موقع پر دونوں فضائیہ کے سربراہان نے دو مختلف جہازوں میں بیٹھ کر فلائنگ مشن میں حصہ لیا۔ یہ پاک فضائیہ کی تاریخ میں پہلا موقع ہے جب کسی غیر ملکی فضائیہ کے سربراہ نے پاک فضائیہ کے سربراہ کے ساتھ ایک فضائی مشن میں شرکت کی۔

مسلح دہشت گردی نے معاشی اور سیاسی دہشت گردی کی کوکھ سے جنم لیا ،جنوبی پنجاب ترقی کرے گا تو ملک ترقی کرے گا:سینیٹر سراج الحق

پاک فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سہیل امان نے اس موقع پر رائل پاکستان ائیر فورس کے چار برطانوی سربراہوں کی نوآموز فضائیہ کی بنیاد رکھنے میں ان کی کاوشوں پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ان قائدین کی شاندار روایات کی تقلید کرتے ہوئے پاک فضائیہ کے آنے والے سربراہان نے اس کو پاکستان کی ایک مہلک فضائی قوت میں تبدیل کرنے کی ہر ممکن کوشش کی۔ انہوں نے کہا کہ دونوں فضائی افواج کے نمبر 9 اسکواڈرنز اپنے آغاز سے ہی شاندار تاریخ کے حامل ہیں۔ دونوں اسکواڈرنز کی یہ رفاقت ایک دوسرے کے تجربات سے فائدہ اٹھانے اور دوستانہ تعلقات کو مزید مضبوط کرنے میں معاون ثابت ہو گی۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے رائل فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سر اسٹیفن جان ہیلیئر نے کہا کہ پاک فضائیہ اپنی پیشہ وارانہ مہارت کی وجہ سے پوری دنیا میں عزت کی نگاہ سے دیکھی جاتی ہے اور اپنے ملک کا پرچم سر بلند کر چکی ہے۔ دونوں مشہور اسکواڈرنز کی یہ رفاقت ان کی قابلیت میں مزید بہتری پیدا کرے گی اور ایک مستحکم بنیاد فراہم کرے گی جس سے اپنے پیش روو¿ ں کی اعلی تاریخ کو بڑھانے میں مدد حاصل ہو گی۔

مزید : اسلام آباد