حکومت بے روزگاری کے خاتمے میں ناکام ، نظام سے بغاوت کرنا ہوگی ، کرپٹ حکمرانوں کی جگہ اقتدار کے ایوان نہیں اڈیالہ جیل ہے:سراج الحق

حکومت بے روزگاری کے خاتمے میں ناکام ، نظام سے بغاوت کرنا ہوگی ، کرپٹ حکمرانوں ...
حکومت بے روزگاری کے خاتمے میں ناکام ، نظام سے بغاوت کرنا ہوگی ، کرپٹ حکمرانوں کی جگہ اقتدار کے ایوان نہیں اڈیالہ جیل ہے:سراج الحق

  


راولپنڈی(ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہاہے کہ حکومت بے روزگاری کے خاتمے میں مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے ،ہمیں اس نظام سے بغاوت کرنا ہوگی،  کرپشن کے خاتمہ کیلئے عوام کو ردالکرپشن آپریشن شروع کرنا ہوگا، کرپشن کی بیماری حکمرانوں کی وجہ سے پھیل کر نیچے تک سرایت کرگئی ،اگر کرپٹ حکمران مسلط نہ ہوتے تو یہ زہر ہر جگہ نہ پھیلتا ،ان ڈاکو لٹیروں کو چن چن کر سزا دی جائے ،کرپشن کرنے والوں کی جگہ اقتدارکے ایوان نہیں راولپنڈی کی اڈیالہ جیل ہے ،نااہل حکمرانوں نے کروڑوں نوجوانوں کا مستقبل تاریک کر رکھا ہے ، عام آدمی حکومت کی ناکام پالیسیوں کی وجہ سے ڈپریشن کا شکار ہے۔

برطانوی فوجی ٹیم نےپاک فوج کے دوسرے پاکستان آرمی ٹیم سپرٹ مقابلوں میں شرکت کی

راولپنڈی میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ حکمرانوں پر کرپشن کے دھبے نہیں ، کوہ ہمالیہ سے بڑے پہاڑ ہیں ، یہاں عوام کے خون پسینے کی کمائی ہڑپ کرنے والے بیٹھے ہوئے ہیں ،عوام کا کام صرف ٹیکس اور بجلی کے بل ادا کرنارہ گیاہے اور اقتدار میں بیٹھا وی آئی پی ٹولہ قومی دولت کو لوٹ کر بیرون ملک منتقل کررہاہے ۔ انہوں نے کہاکہ عوام کو اپنا انتخابی رویہ تبدیل اور اپنی گردنوں کو آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک کے ایجنٹوں سے آزاد کراناہوگا۔ انہوں نے کہاکہ حکمران قومی خزانے کو لوٹ کر باہر منتقل کر دیتے ہیں اور آئی ایم ایف اور ورلڈ بنک سے قرضے لے کر عوام پر قرضوں کا کوہ ہمالیہ لاد رہے ہیں ، کرپٹ حکمرانوں کی وجہ سے قوم کا بچہ بچہ مقروض ہے ۔ انہوں نے کہاکہ جب تک لٹیروں کے اس ٹولے سے نجات نہیں ملتی ملک میں ترقی و خوشحالی کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا ۔ انہوں نے کہاکہ وی آئی پی ٹولہ پاکستانی آئین کو پامال کرتاہے ، قانون پر عمل صرف غریب کرتاہے ہمیں اس وی آئی پی کلچر سے نجات حاصل کرناہوگی ۔ انہو ں نے کہاکہ جماعت اسلامی اقتدار میں آ کر تعلیم و صحت کی سہولتیں مفت کردے گی ، خواتین کی تعلیم پر خصوصی توجہ دی جائے گی،ہم ہر بچے کے ہاتھ میں قلم اور کتاب دیکھناچاہتے ہیں ۔

سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ کشمیر ہر صورت پاکستان بنے گا ،کشمیر میں آزادی کے لیے جانیں قربان کرنے والے نوجوان پاکستانی پرچم میں دفن ہونے کی وصیت کرتے ہیں جبکہ یہاں کے حکمران بھارت کو بجلی دینے کی باتیں کرتے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ کشمیر بھارت کے ہاتھ سے نکل چکاہے ، پاکستانی حکمران کشمیر کی جدوجہد آزادی کو کندھا دینے کے لیے تیار نہیں ہیں ، جبکہ پاکستانی قوم کشمیریوں کی سرپرستی چاہتے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ حکمران جدوجہد آزادی کے شہدا کے خون سے بے وفائی کر رہے ہیں ، حکمرانوں کی طرف سے بھارت کو بجلی دینے کے اعلانات اور آلو ٹماٹر کی تجارت کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف ہے۔

مزید : قومی


loading...