آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس ، نیب نے ایس ایس پی جنید ارشد کو گرفتار کر لیا

آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس ، نیب نے ایس ایس پی جنید ارشد کو گرفتار کر لیا

لاہور،اسلام آباد ( این این آئی،آئی این پی ) قومی احتساب بیورو (نیب ) لاہور نے پنجاب پولیس کے ایس ایس پی جنید ارشد کو آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں گرفتار کر لیا جسے آج (منگل) جسمانی ریمانڈ کے حصول کیلئے احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا ۔ ترجمان نیب لاہور کے مطابق ملزم جنید ارشد کی جانب سے دوران ملازمت مبینہ طور پر اختیارات اور عہدے کے ناجائز استعمال سے کروڑوں روپے کے اثاثے بنائے گئے، ملزم کے بینک اکاؤنٹس میں مبینہ طور پر کروڑوں روپے کی غیر معمولی ٹرانزیکشنز پائی گئی ، لاہور، اسلام آباد کے علاوہ دیگر شہروں میں بھی خطیر مالیت کے پلاٹ ہونیکی اطلاع پر تحقیقات کا آغاز کیا گیا، ملزم جنید ارشد کی جانب سے بلخصوص 2002ء تا 2008ء کے دوران کروڑوں روپے مالیت کے اثاثہ جات بنائے گئے، ملزم کو نیب لاہور کی جانب سے بیان کیلئے زاتی حیثیت میں متعدد مرتبہ طلب کیا جاتا رہا تاہم وہ پیش نہ ہوئے۔نیب حکام کی جانب سے ملزم جنید ارشد کو جسمانی ریمانڈ کے حصول کیلئے آج (منگل ) احتساب عدالت لاہور کے روبرو پیش کیا جائیگا۔دوسری طرف قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا ہے کہ ملک سے بدعنوانی کاخاتمہ اور عوام کی لوٹی ہوئی رقم کی واپسی نیب کی اولین ترجیح ہے۔ نیب نے بدعنوان عناصر سے عوام کی لوٹی ہوئی تقریباََ 303 ارب روپے کی رقم برآمد کرکے قومی خزانے میں جمع کروائی ہے۔ پیر کو ترجمان نیب نے اپنے ایک بیان میں کہاکہ چیئرمین قومی احتساب بیورو نے کہا کہ مضاربہ اور مشارکہ سکینڈلز میں ہزاروں افراد کی لوٹی گئی رقم کی واپسی کیلئے نیب سنجیدہ اقدامات اٹھا رہا ہے اور ابتک36 بڑے ملزمان کی گرفتاری عمل میں لائی جاچکی ہے جن کے مقدمات معزز احتساب عدالتوں میں زیر سماعت ہیں۔انہوں نے کہاکہ نیب عوام کی بدعنوانی سے متعلق شکایات کا قانون اور شواہد کے مطابق جائزہ لے رہا ہے اوربدعنوان عناصرکو قانون کے مطابق منطقی انجام تک پہنچایا جائے گا۔

مزید : صفحہ اول