سائنسدانوں نے چینی کے ذریعے پھیپھڑوں کی بیماریوں کا علاج دریافت کرلیا

سائنسدانوں نے چینی کے ذریعے پھیپھڑوں کی بیماریوں کا علاج دریافت کرلیا
سائنسدانوں نے چینی کے ذریعے پھیپھڑوں کی بیماریوں کا علاج دریافت کرلیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) کھانے پینے کی اشیاءمیں تو چینی کا استعمال ہم سبھی کرتے ہیں لیکن اب برطانوی سائنسدانوں نے چینی کے ذریعے ایک خطرناک بیماری کا علاج بھی دریافت کر لیا ہے۔ میل آن لائن کے مطابق مانچسٹر یونیورسٹی کے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ چینی پھیپھڑوں کی انفیکشن کے علاج کے لیے بھی بہترین چیز ہے۔ پھیپھڑوں میں پائے جانے والے میکروفیگس کو گلوکوز کی ضرورت ہوتی ہے۔ اگر ہم ان کے خلیوں کو زیادہ چینی فراہم کریں تو یہ پھیپھڑوں کی انفیکشن کو ختم کرنے میں مدافعتی نظام کی مدد کرتے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ ”چینی کا یہ فائدہ لوگوں کو برونکیئل (Bronchial)انفیکشنز اور نمونیا سے محفوظ رکھ سکتا ہے۔ برونکیئل انفیکشنز ہی پھیپھڑوں کی انفیکشن کی وہ اقسام ہیں جو شدید کھانسی کے دوروں اور نمونیا کا سبب بنتی ہیں۔ تاہم اگر میکروفیگس کومناسب مقدار میں گلوکوز ملتی رہے تو آدمی کے ان انفیکشنز میں مبتلا ہونے کے امکانات انتہائی محدود ہو جاتے ہیں۔“

مزید : تعلیم و صحت