شام، حمص کے الشعیرات فوجی اڈے پر اسرائیلی طیاروں کی بم باری

شام، حمص کے الشعیرات فوجی اڈے پر اسرائیلی طیاروں کی بم باری

  

دمشق(این این آئی)شام میں انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والی تنظیم سیرین آبزر ویٹری فار ہیومن رائٹس نے کہاہے کہ اسرائیل کے جنگی طیاروں نے حمص میں قائم شامی فوج کے الشعیرات فوجی اڈے پر 8میزائل گرائے۔ دوسری طرف شامی فوج نے جوابی کارروائی کے طورپر اسرائیلی طیاروں پر فائرنگ کی۔میڈیارپورٹس کے مطابق سیرین آبزر ویٹری نے بتایاکہ شام پر حملے کے لیے اسرائیلی طیاروں نے لبنان کی فضاء استعمال کی۔قبل ازیں چھ فروری کو اسرائیل نے شام میں الکسوہ شہر میں قائم شامی فوج کے بریگیڈ 91 اور المزہ عسکری ہوائی اڈے پر بریگیڈ ہیڈ کواٹر 75 میں قائم ایک ریسرچ سینٹر کو نشانہ بنایا تھا جس میں متعدد شامی فوجی اور ایرانی جنگجو ہلاک ہوگئے تھے۔انسانی حقوق گروپ کے مطابق حمص میں قائم الشعیرات فوجی اڈے پر اسرائیلی طیاروں کی بمباری سے زور دار دھماکوں کی آوازیں سنی گئیں۔ فوجی اڈے پر قائم ملٹری تنصیبات سے آگ اور دھوئیں کے شعلے اٹھتے دیکھے گئے۔سیرین آبزر ویٹری کا کہنا تھاکہ شامی ڈیفنس فورس نے متعدد میزائل فضاء ہی میں تباہ کیے مگر بعض اپنے ہدف تک پہنچنے میں کامیاب ہوگئے تھے۔

مزید :

عالمی منظر -