کرونا ایشو پر اپوزیشن جماعتیں پوائنٹ سکورنگ نہ کریں‘ زین قریشی

  کرونا ایشو پر اپوزیشن جماعتیں پوائنٹ سکورنگ نہ کریں‘ زین قریشی

  

ملتان(سپیشل رپورٹر)وفاقی پارلیمانی سیکرٹری مخدومزادہ زین حسین قریشی نے کہا ہے کہ کورونا چیلنجز سے نمٹنے کیلئے سیاست نہیں بلکہ قومی یکجہتی کی ضرورت ہے۔ اپوزیشن اس مسئلہ پر پوائنٹس سکورنگ نہ کرے بلکہ حکومت کے ساتھ ملکر اس چیلنج سے نبرآزماء ہو۔ تب ہی ہم کورونا کو شکست دے سکتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے خواجہ فرید سوشل سکیورٹی ہسپتال (بقیہ نمبر34صفحہ6پر)

ملتان میں قائم قرنطینہ سینٹر کا معائنہ کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا حکومت اس چیلنج سے نمٹنے کیلئے اپنی استعداد سے بڑھ کر کام کررہی ہے۔ تمام وسائل اس وباء کے خاتمے کیلئے بروئے کار لائے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا حکومت اکیلی کچھ نہیں کرسکتی عوام کو حکومت کا ساتھ دینا ہوگا۔ حکومت اور طبی ماہرین کی جانب سے جاری کردہ ہدایات پر سختی سے عمل درآمد کریں۔ غیر ضروری سفر سے گریز اور سماجی فاصلے کی جاری کردہ ہدایات پر عمل درآمد کریں۔ انہوں نے کہا سوشل سکیورٹی ہسپتال سمیت ملک بھر میں قائم قرنطینہ سینٹر میں کام کرنے والے ڈاکٹرز‘ پیرا میڈیکل سٹاف اور دیگر اداروں کے ملازمین ہمارا سرمایہ اور ہیرو ہیں۔ یہ وہ لوگ ہیں جو اپنی جان جوکھوں میں ڈال کر عوام کی صحت اور زندگی کا تحفظ کررہے ہیں۔ حکومت فرنٹ لائن پر کام کرنے والے میڈیکل سٹاف کی زندگیوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے پرسنل پروٹیکٹواکیومنٹ کی فراہمی (PPE) کو یقینی بنائے گی۔ صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر اختر ملک نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا پنجاب حکومت عوام کے جان ومال کے تحفظ کی فراہمی کو اہم سمجھتی ہے۔ اس مقصد کیلئے صحت ایمرجنسی پروگرام کے تحت کورونا سے نمٹنے کیلئے ایک خطیر بجٹ مختص کردیا ہے۔انہوں نے کہا سوشل سکیورٹی ہسپتال کے ڈاکٹروں کے مسائل ترجیح بنیادوں پر حل کئے جائینگیس موقع پر سابق صوبائی وزیر معین ریاض قریشی‘ بریگیڈیئر(ر) مقصود قریشی‘ ایم ایس سوشل سکیورٹی ہسپتال ڈاکٹر طارق شیخ‘ ڈپٹی میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر آصف قریشی‘ ڈاکٹر عابدہ امجد موجود تھے۔ بعد ازاں وفاقی پارلیمانی سیکرٹری مخدومزاہ زین حسین قریشی اور صوبائی وزیر توانائی ڈاکٹر اختر ملک نے خواجہ فرید سوشل سکیورٹی ہسپتال ملتان میں قائم قرنطینہ سینٹر کا معائنہ کیا۔ اس موقع پر ایم ایس ڈاکٹر طارق شیخ نے انہیں قرنطینہ سینٹر میں فراہم کی جانے والی سروسز بارے بریف کیا۔

زین قریشی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -