چارسدہ، کرونا کے چا ر مریضوں میں سے ایک صحت یاب، گھر منتقل

چارسدہ، کرونا کے چا ر مریضوں میں سے ایک صحت یاب، گھر منتقل

  

چارسدہ (بیو رو رپورٹ) چارسدہ میں کرونا وائرس کے چا ر مریضوں میں ایک مریض صحت یاب۔ گھر منتقل۔ جمال آباد میں میاں بیوی میں کرونا وائرس کی تصدیق کے بعد علاقہ سل کر دیا گیا۔مشتبہ مریضوں کی تعداد 16تک پہنچ گئی۔ بیرون ملک سے آئے ہوئے اور تبلیغی جماعت سمیت 100سے زائد افراد سلف کرونٹائن کر دئیے گئے۔ تفصیلات کے مطابق چارسدہ میں کرونا وائرس کے چا ر مریضوں میں ایک مریض محمد سلیمان صحت یاب ہو گیا جن کو چارسدہ ہسپتال سے گھر منتقل کیا گیا جبکہ تین مریضوں کو چارسدہ اور دیگر ہسپتالوں کے ائیسولیشن روم میں رکھا گیا ہے جہاں ان کی نگہداشت جاری ہے۔ اس حوالے سے اسسٹنٹ کمشنر تنگی عدنان جمیل نے میڈیا سے بات چیت کر تے ہوئے کہا کہ جمال آباد میں میاں بیوی میں کرونا وائرس کی تصدیق کے بعد علاقے کے 14گھروں کو سل کر دیا گیا ہے جبکہ علاقے میں میڈیکل ٹیمیں بھیج دئیے گئے ہیں جہاں تمام مکینوں کے خون کے نمونے تجزیے کیلئے لیبارٹری بھیج دئیے جائینگے۔ علاقے میں جراثیم کش سپرے کا عمل بھی شروع کر دیا گیا ہے۔ دوسری طرف کرونا وائرس سے صحت یاب ہونے والے مریض محمد سلیمان کے حوالے سے فوکل فرسن ڈاکٹر فیروز شاہ نے بتا یا کہ موصوف 9 مارچ کو سعودی عرب سے پاکستان آئے تھے جن کو ابتدائی طور پر شک کی بنیاد پر چارسدہ ہسپتال میں داخل کیا گیا تھا جہاں ان کے خون کے نمونے تشخیص کے لیے لیبارٹری بجھوائے گئے تھے جس میں کرونا وائر س کی مثبت رپورٹ آئی تھی۔ڈاکٹر فیروز شاہ کے مطابق متاثرہ مریض کو پندرہ دن تک چارسدہ ہسپتال کے ائیسولیشن روم میں رکھا گیا تھا۔گزشتہ روز ان کے خون کے نمونے تجزئے کے لیے دوبارہ لیبارٹری بجھوادیے گئے جس کی رپورٹ نیگٹیو آئی ہے اور اب وہ مکمل صحت یاب ہو چکے ہیں۔ڈاکٹر فیروز شاہ کے مطابق کرونا وائرس کے باقی تین مریضوں کو بھی مختلف ہسپتالوں کے ائیسولیشن روم میں رکھا گیا ہے۔ڈاکٹر فیروز شاہ کا مشتبہ مریضو ں کی تعداد کے حوالے سے کہنا تھا کہ ضلع چارسدہ میں مشتبہ مریضوں کی تعداد 16 تک پہنچ گئی ہے جبکہ بیرون ملک سے آنے والے اور تبلیغی جماعت سمیت سو سے زائد افراد کو گھروں اور تبلیغی مرکز میں سلف کورنٹائن کیا گیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -