اسامہ بن لادن کی ماں اور بہن کے طیارے کو حادثے کی وجہ کیا بنی ؟

اسامہ بن لادن کی ماں اور بہن کے طیارے کو حادثے کی وجہ کیا بنی ؟
اسامہ بن لادن کی ماں اور بہن کے طیارے کو حادثے کی وجہ کیا بنی ؟

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ روزبرطانیہ میںاسامہ بن لادن کے خاندان کا 70لاکھ پاﺅنڈز(تقریباً 1ارب 13کروڑ)مالیت کا ذاتی جہاز گر کر تباہ ہو گیا تھا جس میں اسامہ بن لادن کی سوتیلی ماں اور بہن سمیت 4افراد جاں بحق ہو گئے۔ طیارے کے اس حادثے کی ابتدائی تحقیقات میں پائلٹ کی سنگین غلطیاں سامنے آئی ہے جن کی وجہ سے طیارہ حادثے کا شکارہوا۔ رپورٹ کے مطابق لینڈنگ کے لیے ایئرپورٹ کے قریب آنے سے چند لمحے قبل جہاز کی بلند1250فٹ تھی لیکن پائلٹ جہاز کی بلندی کو کم کرنے کی بجائے یکدم مزید 500فٹ اوپر لے گیا۔ جہاز کو اوپر لےجانے کے بعد اس کی بلند 1750فٹ ہو گئی حالانکہ لینڈنگ کے وقت جہاز کو اوپر لیجانے کی بجائے نیچے لایا جاتا ہے۔پھر لینڈنگ سے قبل پائلٹ یکدم جہاز کو نیچے لے کر آیا، نیچے آنے کی رفتار 3000فٹ فی منٹ کے تناسب سے تھی اور یہ تناسب خطرناک حد تک زیادہ تھا۔ ہیمپشائر ایئرپورٹ کے رن وے کی لمبائی 1059میٹر ہے، لینڈنگ کے وقت جہاز کی رفتار149kts(تقریباً 277کلومیٹر فی گھنٹہ)تھی، حالانکہ اس قدر چھوٹے رن وے پر لینڈنگ کے لیے جہاز کی رفتار زیادہ سے زیادہ120kts(تقریباً 222کلومیٹر فی گھنٹہ) ہونی چاہیے تھی۔ جہاز کا یکدم بلندی پر جانا اور اس کی رفتار زیادہ ہونا،یہی دو عوامل ہیں جو اس کی تباہی کا باعث بنے۔ زیادہ بلندی اور رفتار کے باعث جہاز رن وے پر نہ اتر سکا اور اس سے آگے نکل گیا اوررن وے کے اگلے سرے پر بولی کے لیے کھڑی کاروں کے درمیان گر کر تباہ ہو گیا۔ جب طیارہ رن وے کے اگلے کنارے سے آگے نکلا تو اس کی بلندی 75فٹ تھی۔

طیارے کے حادثے کی تحقیقات پر مبنی یہ اعدادوشمار اور تباہ چند لمحے قبل جہاز کی لی گئی تصاویر AvGen Ltdنامی کمپنی نے شائع کی ہیں۔ کمپنی کے منیجنگ ڈائریکٹر ڈیو ریڈ نے برطانوی اخبار ڈیلی میل سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم لندن کا ہیتھروایئرپورٹ استعمال کرنے والے طیاروں کی مانیٹرنگ کرتے ہیں لیکن ہیمپشائر ایئرپورٹ پر اس طیارے کے حادثے کے بعد ہم نے اس کی وجوہات معلوم کرنے کے لیے کچھ فضائی کمپنیوں سے ڈیٹا اکٹھا کیا۔ حادثے کا شکار ہونے والا طیارہ بنانے والی کمپنی کے حکام کا کہنا ہے کہ اس طیارے کو لینڈ کرنے کے لیے 799میٹر طویل رن وے کی ضرورت ہوتی ہے جبکہ ہیمپشائر ایئرپورٹ کا رن وی 1059میٹر ہے جس سے پائلٹ کے پاس صرف 250میٹر زائد جگہ بچتی ہے، اتنی کم جگہ میں اترنے کے لیے طیارے کی بلندی انتہائی کم ہونی چاہیے تھی لیکن پائلٹ رن وے کے قریب آ کر طیارے کو مزید اوپر لے گیا، یہی بلندی طیارے کے حادثے کا باعث بنی۔ ماہرین کے مطابق جہاز کاپائلٹ اناڑی نہ تھا لہٰذا اس طرح کی حرکات کی وجہ کیا بنی یہ ایک معمہ ہے اور آنے والے دنوں میں تفتیش کار اس معمہ کو حل کرنے کی کوشش کریں گے۔

مزید :

بین الاقوامی -