جسٹس (ر) رضا کا انتخابی نتائج میں تاخیر کا نوٹس ، صوبائی الیکشن کمشنرز سمیت ڈی آر اوز سے وضاحت طلب

جسٹس (ر) رضا کا انتخابی نتائج میں تاخیر کا نوٹس ، صوبائی الیکشن کمشنرز سمیت ڈی ...

  



اسلام آباد/کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک ،آئی این پی ) چیف الیکشن کمشنر نے عام انتخابات کے نتائج میں تاخیر کا نوٹس لیتے ہوئے کہا ہے کہ الیکشن قوانین کے مطابق رات 2بجے تک نتائج تیار کرنا تھے تاخیر کیوں ہوئی ۔ تفصیلات کے مطابق چیف الیکشن کمشنر جسٹس(ر) سردارمحمد رضا خان نے عام انتخابات کے نتائج میں تاخیر کا نوٹس لے لیا اور صوبائی الیکشن کمشنرز سمیت ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسرز سے وضاحت طلب کرلی ہے۔الیکشن کمیشن کی جانب سے تحریری حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ الیکشن قوانین کے مطابق رات 2بجے تک نتائج تیار کرنا تھے تاخیر کیوں ہوئی۔ دوسری جانب الیکشن کمیشن نے کہا ہے کہ کامیاب امیدواروں کیلئے انتخابی اخراجات کے گوشوارے جمع کرانا لازمی ہے اس کے بعد ہی ان کی کامیابی کے نوٹیفکیشن جاری کیا جائے گا۔ ایک بیان میں الیکشن کمیشن نے عام انتخابات 2018ء میں کامیاب ہونے والے تمام اراکین کو ہدایت کی ہے کہ جلد از جلد اپنے انتخابی اخراجات کے گوشوارے ریٹرننگ افسر کے پاس جمع کرا دیں تاکہ ان کی کامیابی کا نوٹیفکیشن جاری ہو سکے۔

چیف الیکشن کمشنر

مزید : صفحہ اول