ڈالر سستا، مہنگائی کا پھر بھی طوفان، انتظامیہ شہریوں کو ریلیف دینے میں ناکام

ڈالر سستا، مہنگائی کا پھر بھی طوفان، انتظامیہ شہریوں کو ریلیف دینے میں ناکام

  



ملتان (نیوز رپورٹر)ملک میں ڈالر کی قیمتوں میں نمایاں کمی آنے کے باوجود (بقیہ نمبر43صفحہ7پر )

اشیائے ضروریہ کی قیمتیں بدستور پرانے نرخوں پر صارفین خریدنے پر مجبور ہیں جبکہ انتظامیہ بھی اس صورتحال کا نوٹس لینے اور شہریوں کو ریلیف دینے میں مکمل طور پر ناکام نظر آتی ہے تفصیلات کے مطابق نگران حکومت کے اقتدار سنبھالنے کے چند ہی روز بعد ڈالر کو پرلگنے کے باعث اس کی قیمت 104روپے سے بڑھ کر 134روپے کی ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی جس کے اثرات ضروریات زندگی بالخصوص اشیانے خوردنوش وضروریہ سمیت الیکٹرونکس‘ پٹرول، ڈیزل، ودیگر اشیاء پر ہونے سے ان اشیا کی قیمتیں بھی بڑھ گئیں تاہم ملک میں حالیہ جنرل الیکشن میں تحریک انصاف کی نمایاں کامیابی کی وجہ سے ڈالر کی قیمت 134سے کم ہوکر 115کی سطح پر آپہنچی ہیں اس طرح سونا کی قیمت بھی فی تولہ 58ہزار روپے سے کم ہوکر 54ہزار روپے فی تولہ کی سطح پر پہنچ گئی ہے لیکن ضروریات زندگی کی اشیاء کے نرخ بدستور آسمان سے باتیں کررہے ہیں جس پر صارفین تشویش کا اظہار کررہے ہیں کہ جو بزنس کمیونٹی ڈالر کے ریٹ بڑھنے پر ضروریات زندگی کی تمام اشیاء کے نرخوں میں ازخود اضافہ کردیتے ہیں انہیں ڈالر کی قیمتوں میں کمی کا فائدہ بھی صارفین کو فراہم کرنے میں تکلیف نہیں ہونے چاہیے شہریوں نے ڈی سی ملتان سے استدعا کی ہے کہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو فعال کرتے ہوئے اشیا نے خوردنوش وضروریہ کی قیمتوں کو بھی اسی تناسب سے کم کیا جائے جس تناسب سے ڈالر کی قیمتوں میں کمی آرہی ہے۔

ڈالر میں کمی

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...