ہماری ڈگریاں کہاں ہیں؟ اندس یونیورسٹی کے سٹوڈنٹس کا ائلٰی غکام سے سوال

ہماری ڈگریاں کہاں ہیں؟ اندس یونیورسٹی کے سٹوڈنٹس کا ائلٰی غکام سے سوال

  



ڈیرہ غازیخان(سٹی رپورٹر )پانچ سال عرصہ گزرنے کے باوجودانڈس یونیورسٹی کے ایم فل کے طلبا و طالبات ڈگریوں سے محروم ہیں۔ طلبا ادریس نواز خان چانڈیہ،اختر عباس کھوسہ (بقیہ نمبر29صفحہ12پر )

،عابد حسین‘ سعید احمد طالبات زرناجی،ریحانہ پروین اور سلما بی بی سمیت دیگر نے کہا ہے کہ ان سمیت دیگر کو متذکرہ ادارہ میں ایم فل پروگرام میں داخلہ کی آفر دی گئی جس پر ڈویژن بھر کے سینکڑوں طلبا اور طالبات نے ایم فل پروگرام میں داخلہ لے لیا ان طلبا اور طالبات سے داخلہ فیس اور دیگر واجبات کی مد میں لاکھوں روپے وصول کیے گئے لیکن پانچ سال کو طویل عرصہ گزرنے کے باوجود وہ ڈگریوں کے حصول سے محروم چلے آرہے ہیں اور کوئی ذمہ دار شخص اس وقت ادارہ میں موجود ہ نہیں ہے جس سے وہ اپنی ڈگریوں کے سلسلہ میں معلومات حاصل کرسکیں۔ انہوں نے اس صورت حال کی وجہ سے نہ صرف ان کا قیمتی وقت ضائع ہوچکاہے بلکہ لاکھوں روپے لینے والے اپنے آپ کوجواب دہ سمجھنے کے لئے تیارنہیں انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان سے اپیل کی وہ ان کی ڈگریوں کے حصول میں ہماری مدد کریں۔

ہماری ڈگریاں

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...