کوئی مسلمان انتہا پسند ہو سکتا ہے اور نہ جاہل،اسلام بین المذاہب مکالمہ کیلئے مضبوط فکری بنیادیں فراہم کرتا ہے:ڈاکٹر طاہرالقادری

کوئی مسلمان انتہا پسند ہو سکتا ہے اور نہ جاہل،اسلام بین المذاہب مکالمہ کیلئے ...
کوئی مسلمان انتہا پسند ہو سکتا ہے اور نہ جاہل،اسلام بین المذاہب مکالمہ کیلئے مضبوط فکری بنیادیں فراہم کرتا ہے:ڈاکٹر طاہرالقادری

  


مانچسٹر(ڈیلی پاکستان آن لائن)قائد تحریک منہاج القرآن ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نےکہا ہے کہ اسلام امن اور بین المذاہب رواداری کا علمبردار ہے، کوئی مسلمان انتہا پسند ہو سکتا ہے اور نہ کسی بے گناہ کی جان لے سکتا ہے، اسلامی تعلیمات بین المذاہب مکالمہ اور رواداری کے فروغ کیلئے فکری بنیادیں فراہم کرتی ہیں، میثاق مدینہ اور ریاست مدینہ اس کا ایک شاندار ماڈل ہے، امت مسلمہ اپنا کھویاہوا مقام حاصل کرنا چاہتی ہے تو اسے اسلاف کے علم و تحقیق والے راستے پر چلنا ہو گااور مسلم ممالک کو نوجوانوں کی کردار سازی اور تعلیم و تربیت پر بھاری انویسٹمنٹ کرنا ہو گی، جہالت ،تنگ نظری اور انتہا پسندی کے خاتمے کے لیے جدوجہد کرنا اسلام کی بنیادی تعلیمات ہیں۔

برطانیہ کے شہر  مانچسٹر میں نوجوانوں کی تعلیم و تربیت کے حوالے سے منعقدہ الہدایہ کیمپ 2019 ء سے خطاب کررہے تھے، الہدایہ کیمپ میں برطانیہ، یورپ اور نارتھ امریکہ سے تعلق رکھنے والے ایک ہزار سے زائد نوجوان جن میں خواتین بھی شامل ہیں شریک ہیں، یہ دو روزہ کیمپ کل  3اگست کو انعقاد پذیر ہو گا اور دو روزہ کیمپ کو 5سیشنز میں تقسیم کیا گیا ہے جس میں نوجوانوں کی کردار سازی، عصری چیلنجز سے نمٹنے کے قابل بنانے ،رولزآف کنڈکٹ اور مثبت رویوں کو پروان چڑھانے سمیت مختلف موضوعات پر سوال و جواب کے سیشنز ہونگے جن میں ڈاکٹر محمد طاہرالقادری برٹش نوجوانوں کے سوالات کا جواب بھی دیں گے۔ڈاکٹر طاہرالقادری نے الہدایہ کیمپ میں دور دراز کا سفر طے کر کے شریک ہونے والے نوجوانوں کو مبارکباد دی اور انہیں امن کا سفیر قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ اللہ تعالیٰ کی بہت بڑی نعمت اور توفیق ہے کہ نوجوانی کی عمر میں انسان کردار سازی اور اخلاقی تربیت کے لیے وقت بھی نکالے اور طویل ترین سفر بھی کرے۔ انہوں نے کہا کہ الحمداللہ تحریک منہاج القرآن نوجوانوں کی کردار سازی ،انہیں انتہا پسندی سے بچانے اوراعلیٰ تعلیم کے مواقع فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ انہیں بین الاقوامی معاملات سے باخبر رکھنے کے کیلئے 3دہائیوں سے مصروف عمل ہے۔ 2روزہ الہدایہ کیمپ 2019 ء جو مانچسٹر میں انعقاد پذیر ہے اس میں بڑی تعداد میں نوجوان شریک ہیں جو اس بات کا ثبوت ہے کہ آج کا نوجوان علم اور امن سے محبت کرتا ہے اور انتہا پسندی ،تنگ نظری اورجہالت سے نفرت کرتا ہے۔

مزید : برطانیہ