متحدہ جہاد کونسل کے چیئرمین کو بھارت مےں اشتہاری قراردے دےا گےا

متحدہ جہاد کونسل کے چیئرمین کو بھارت مےں اشتہاری قراردے دےا گےا

  

نئی دہلی ( کے پی ائی)نئی دہلی کی ایک عدالت نے متحدہ جہاد کونسل کے چیئرمین اور حزب المجاہدین کے سربراہ سید صلاح الدین اورسات دیگر عسکرےت پسندوں کواشتہاری ملزم قرار دیاہے۔ ذرائع نے کہاکہ قومی تحقیقاتی ایجنسی این آئی اے نے ایک خصوصی عدالت میںحزب الجماہدین کے دس عسکرےت پسندوںکے خلاف آئی پی سی کی دفعات 120Bاور121Aکے علاوہ غیرقانونی سرگرمیوںکے انسداد سے متعلق قانون کی دفعات 17،18،18A، 18B،38،39اور 40 کے تحت چارج شیٹ دائر کی ۔چارج شیٹ کا جائزہ لینے کے بعد عدالت نے حزب المجاہدین کے چیف کمانڈر محمد یوسف شاہ عرف سید صلاح الدین ، ڈپٹی کمانڈر غلام نبی خان عرف عامر خان ساکنان جموں و کشمیر حال پاکستان سمیت آٹھ افرادکو اشتہاری ملزم قراردیا۔ اس دوران این آئی اے نے حزب المجاہدین کے دو سابق عسکرےت پسندوں محمد شفیع شاہ عرف داو?د عرف ڈاکٹر اور طالب لالی عرف طالب حسین لالی عرف وسیم عرف ابو عمیر ساکنان بانڈی پورہ کو بھارت میں عسکر ی سرگرمیاں انجام دینے کی خاطر فنڈنگ کے الزام میں ب±ک کرلیا ۔سرکاری ذرائع نے بتایاکہ این آئی اے کی جانب سے کی گئی تحقیقات کے مطابق جموںو کشمیر ایفکٹیز ریلیف ٹرسٹ کی آڑمیں پاکستان میں مقیم حزب المجاہدین کے عسکرےت پسندوں نے مختلف راستوں سے بھارت میں سرگرم عسکرےت پسندوں کو پیسے فراہم کئے ۔ قابل ذکر ہے کہ شفیع شاہ کو اکتوبر 2011میں فورسزنے سرینگر کے مضافات سے گرفتار کیاتھا۔

 جس کے بعد انہیں این آئی اے کی تحویل میں دیاگیاتھاجبکہ طالب لالی کو بانڈی پورہ میں 4ستمبر کو ہونے والے ایک مختصر معرکہ کے دوران پولیس اور فوج نے گرفتار کیاتھا اورانہیں بھی بعد میں این آئی اے کی تحویل میں دے دیاگیا۔ذرائع کے مطابق تحقیقات سے یہ ثابت ہواکہ حزب کی جانب سے جموں وکشمیر میںپیسے بھیجنے کیلئے حوالہ ،بنکنگ نیٹ ورک ، آر پار تجارت سمیت کئی ذرائع استعمال کئے گئے ۔ ان ذرائع نے بتایاکہ شفیع شاہ عرف داو?د عرف ڈاکٹرنے حزب المجاہدین کی ایماپر ریاست میں تیرہ کروڑ روپے حاصل کرکے انہیں عسکر ی سرگرمیوں کی خاطر تقسیم کیا ۔#

مزید :

عالمی منظر -