گیس کی شدید ترین قلت، گھریلو سطح پر پر یشر 4 سے چھ گھنٹے ڈاﺅن

گیس کی شدید ترین قلت، گھریلو سطح پر پر یشر 4 سے چھ گھنٹے ڈاﺅن

لاہور ( خبرنگار )صوبائی دارالحکومت سمیت پنجاب بھر میں گیس کی شدید ترین قلت پیدا ہو گئی ہے جس کے باعث گیس کا شارٹ فال 800 ملین کیوبک فٹ تک پہنچ گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق گیس حکام تمام تر اقدامات کے باوجود گھریلو سیکٹر میں گیس کی کھپت کو پورا کرنے میں ناکام ہو گیا ہے اور سردی کی شدت سے قبل ہی گیس کی شدید ترین قلت پیدا ہو گئی ہے جس کے باعث گھریلو سطح پر گیس کا پریشر 4 سے چھ گھنٹے ڈاﺅن ہونا شروع ہوگیاہے ۔ دوسری جانب گیس نہ ملنے پر ایل پی جی کا استعمال بڑھ کر رہ گیا ہے اور ایل پی جی نہ ملنے پر صارفین نے لکڑی کا استعمال شروع کر دیا ہے جس پر صارفین نے گیس بلوں کو ادا نہ کرنے کی دھمکی دے دی ہے ۔صارفین کا کہنا ہے کہ گیس حکام نے گیس کی سپلائی کو یقینی نہ بنایا تو گیس کمپنی کے دفاترکا گھیراﺅ کیاجائے گا اور گیس کمپنی کے ہیڈ آفس کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔ گیس کی کھپت اور گیس ڈیمانڈ بڑھنے کے حوالے سے گیس کمپنی کے جی ایم محمود ضیاءاحمد کا کہنا ہے کہ گیس کی ڈیمانڈ کے مقابلہ میں ذخائر کی کمی کا سامنا ہے ۔

مزید : صفحہ آخر