اورنج لائن میٹروٹرین منصوبہ کے متاثرین کا احتجاج جاری

اورنج لائن میٹروٹرین منصوبہ کے متاثرین کا احتجاج جاری

  

لاہور(اپنے نمائندے سے) اور نج لائن میٹرو ٹرین منصوبہ شہریوں کے لئے وبال جان بن گیا،بجلی کی بندش،گیس ،پانی کی لائن ترقیاتی کاموں کے دوران کٹ جانے سے گھریلوں صارفین کسمپرسی کی زندگی گزارنے پر مجبور ہوگئے ،کئی پوش علاقوں میں ہفتوں سے گیس ،پانی اور بجلی کی قلت ، بجلی کی لٹکتی تاریں کسی بھی جان لیوا حادثے کاسبب بن سکتی ہیں، پانی کامناسب نکاس نہ ہونے سے جگہ جگہ پانی کھڑا ہو کر آلودگی پھیلانے اور مختلف بیماریاں پھیلانے کا سبب بن رہا ہے، شہریوں کی کثیر تعداد محکموں کی بے حسی اور ناقص منصوبہ بندی کے باعث سراپا ء احتجاج بن گئی ،جگہ جگہ مظاہرے شروع ہو گئے ،معلومات کے مطابق اورنج لائن ٹرین منصوبے کے روٹ علی ٹاؤن،نیاز بیگ ، کینال ویو ،ہنجروال،وحدت روڈ ،اعوان ٹاؤن، سبزہ زار ، شاہنور ، صلاح الدین روڈ،بند روڈسمن آباد ، گلشن راوی ، چوبرجی،انارکلی ،لکشمی،لاہور ریلوے اسٹیشن ، سلطان پورہ ، یو ای ٹی،باغبانپورہ، شالیمار گارڈن ، پاکستان منٹ ، محمودبوٹی ،سلامت پورہ،اسلام پارک ، ڈیرہ گجراں تک کئی ایسے پوش علاقو ں کے مکینوں کی زندگی مشکلات سے دوچار ہو گئی ہے۔سمن آباد،چوبرجی اور ریلوے اسٹیشن جیسے گنجان آباد علاقوں میں کئی کئی روز سے بجلی اور گیس کی سپلائی منقطع ہے جس کی وجہ یہ بتائی جارہی ہے کہ اورنج ٹرین کے روٹ کی تعمیر کے ساتھ پانی اور بجلی کی سپلائی لائنوں کوبھی دوسری جگہ منتقل کیا جارہا ہے ، جگہ جگہ بجلی کی ننگی اور لٹکتی تاریں کسی بھی وقت کسی جان لیوا حادثے کا پیش خیمہ بن سکتی ہیں،۔ شہری فضائی آلودگی اور نکاسی آب جیسے مسائل سے دوچار ہو کر حکومت وقت کے خلاف سراپا احتجا ج بن گئے ہیں ، جگہ جگہ مظاہرے شروع ہونے کے ساتھ ساتھ کئی لوگوں نے اورنج لائن ٹرین منصوبے کے خلاف اعلیٰ عدالتوں سے رجوع کر لیا ہے،چوک چوبرجی ،سمن آباد،باغبابپورہ، گلشن راوی اور شالیمار گارڈن کے رہائشی محمد ثقلین،علی مشتاق، شہزاد علی،طالب حسین عزیز احمد اور علی نقی نے کہا کہ ہمارے علاقوں میں کئی کئی روز سے بجلی اور گیس نہیں آرہی ہم حکومت کی ناقص منصوبہ بندی کی وجہ سے پتھروں کے زمانہ میں پہنچ گئے ہیں جہاں نہ بجلی ہوتی تھی اور نہ گیس ہوتی تھی اگر حکومت نے ہم پر زندگیاں تنگ کرنی ہیں تو ہمیں ان کو ووٹ دے منتخب کرنے کا کیا فائدہ ہوا ہے،ہم ترقیاتی منصوبوں کے خلاف نہیں ہیں لیکن ہر کام کے لئے کوئی کوئی نہ منصوبہ بندی بھی ہوتی ہے ہے ،ہماری وزیر اعلی ٰ شہباز شریف اور تمام اداروں کے سربراہان سے اپیل ہے کہ ترقیاتی کام کرنے سے پہلے لوگوں کو باہم مہیا کی گئی سہولتوں کا بھی متباد ل پیدا کیا جائے تاکہ ہماری مشکلات آسان ہو سکیں ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -