حکومت نے اسمبلی کی منظوری کے بغیر ہی عوام پر نیا بجٹ زبردستی لاگو کردیا ،یوسف اعوان

حکومت نے اسمبلی کی منظوری کے بغیر ہی عوام پر نیا بجٹ زبردستی لاگو کردیا ،یوسف ...

  

لاہور(نمائندہ خصوصی )پیپلز پارٹی علماء ونگ پنجاب کے صدر اور اسلامی نظریاتی کونسل کے رکن علامہ محمد یوسف اعوان نے کہا ہے کہ اگر حکومت نے عوام پر نئے ٹیکس لگانے ہیں تو ان کو لگانے سے پہلے اس کی منظوری قومی اسمبلی سے لی جائے اور جب تک اسمبلی اس کو منظور نہ کرلے تب تک ان نئے ٹیکسوں کو عوام پر لاگو کرنے سے گریز کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ یہ پہلی مرتبہ ہوا ہو گا کہ حکومت نے اسمبلی کی منظوری کے بغیر ہی ایک طرح سے عوام پر ایک نیا بجٹ زبردستی لاگو کردیا ہے اور جون سے پہلے ہی جون والا بجٹ عوام پر ڈال دیا ہے اور یوں لگتا ہے کہ جیسے حکومت عوام سے سانس لینے کا حق بھی چھیننا چاہتی ہے۔

بلاشبہ اس نئے بجٹ کی وجہ سے ملک میں اضافہ سے مہنگائی کا ایک نیا سلاب آئے گا اور نئے ٹیکس کی وجہ سے ہر چیز کا ریٹ بھی بڑھ جائے گا ۔انہوں نے کہاکہ جس وقت میاں نواز شریف اپوزیشن میں تھے تو اس وقت وہ عوام کو بڑے سہانے خواب دکھایا کرتے تھے کہ ہم جب حکومت میں آئیں گے تو نئے ٹیکس نہیں لگائیں گے۔

غیر ملکی بینکوں سے قرض نہیں لیں گے لیکن اب کیوں وہ غیر ملکی قرضون کا بوجھ عوام پر ڈال رہے ہیں ۔

اب ان کی بڑی بڑی باتیں کہاں گئی ہیں ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -