انجمن تاجران ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ کااشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے اعلان پر اظہار تشویش

انجمن تاجران ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ کااشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے اعلان پر ...

  

لاہور (کامرس رپورٹر)انجمن تاجران ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ نے313اشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی کے اعلان پر اظہار تشویش کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے مہنگائی میں بے پناہ اضافہ ہو جائیگا اور مہنگائی نہ تھمنے والا طوفان آئیگاجو غریبوں کو بہا کر لے جائے گاگزشتہ روز انجمن تاجران الیکٹرونکس ہال روڈ لنک میکلوڈ روڈ کا اجلاس زیر صدارت صدر محمد شبیر لبھا ہواجس میں جنرل سیکرٹری بابر علی خان، ملک خالد اقبال، ثاقب ملک، حاجی نواز پپو ، چودھری جمشید ، مظہر امین بٹ، ایس ایم اختر، آصف محمود بٹ، محمد سعید ، افضال صدیقی اور دیگر تاجروں نے بھی شرکت کی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے محمد شبیر لبھا نے کہا کہ 313اشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی سے5.5کروڑ متوسط افراد براہ راست متاثر ہونگے۔اور اس فیصلے سے ملک میں سمگلنگ کوتقویت ملے گی۔ آنیوالے مہینوں میں پاکستان میں مہنگائی میں اضافہ ہوگا۔اس لئے حکومت40ارب روپے کے ٹیکسزعائد کرنے کی بجائے سٹاک ایکسچینج ،زراعت اور پراپرٹی کے شعبوں پر موثر انداز میں ٹیکس عائد کرے تو اسے کئی سو ارب روپے کا ریونیو مل سکتا ہے ،حکومت ان اضافی وسائل کو عوام کی فلا ح پر استعمال کر سکتی ہے۔

اس لئے حکومت اپنے فیصلہ پر نظر ثانی کرے۔ محمد شبیر لبھا نے کہا کہ درآمدی پھل،سبزی،دہی،مکھن،ڈبل روٹی ،مشروبات،شیمپو سمیت 313 اشیاء پر ریگولیٹری ڈیوٹی بڑھانے سے سمگلنگ میں بہت زیادہ اضافہ ہو گا ،یہ ڈیوٹی ان تمام سکیٹرز پر لگائی گئی ہے جو پہلے ہی نیٹ ورک میں نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت چھوٹے تاجروں کو درآمدی ڈیوٹی کی شرح میں ریلیف دے اس کے علاوہ حکومت غریب عوام کیلئے خصوصی ریلیف فراہم کرے ، وہ اشیاء جو سمگل ہو کر پاکستان غیر قانونی طور پر آتی ہیں ان پر سختی کی جائے اور اشیاء پر ڈیوٹیاں کم کی جائیں تاکہ قانونی طریقے سے یہ مال امپورٹ ہواور سرکاری خزانے میں بھی کروڑوں روپے وصول ہوں سمگلنگ اور انڈر انوئسنگ نے ہماری مقامی امپورٹ اور انڈسڑی کو بری طرح سے نقصان پہنچایا ہے اس کو روکنے کیلئے حکومت کو آہنی ہاتھوں سے نمٹنا ہو گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -