طالبعلم کو قتل کرنے کے مقدمہ میں ملزم راضی نامہ ہونے پربری

طالبعلم کو قتل کرنے کے مقدمہ میں ملزم راضی نامہ ہونے پربری

  

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج مبشر ندیم نے انجینئرنگ کے طالبعلم کو قتل کرنے کے مقدمہ میں ملوث ملزم کو راضی نامے ہونے پربری کردیا۔ استغاثہ کے مطابق مظفر گڑھ کے رہائشی ملزم خبیب ظفر کی بہن (خ )جی سی یونیورسٹی میں پڑھتی تھی جہاں اس کے ساتھ خانیوال کا رہائشی فرحان انجینئرنگ کی تعلیم حاصل کررہا تھا ،مذکورہ نوجوان نے ملزم کی بہن کے ساتھ مبینہ طور پر تعلقات استوار کررکھے تھے جس کی پاداش میں لڑکی کے بھائی ملزم خبیب ظفرنے طیش میں آکر 2014ء میں طالبعلم فرحان کو جوہرٹاؤن کے علاقہ میں دھوکہ سے بلا کر فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا۔

جس کے بعد تھانہ جوہرٹاؤن پولیس نے مقتول کے والد احسان الحق کی مدعیت میں مقدمہ نمبر842/14بجرم302درج کرنے کے بعد تفتیش مکمل کرکے چالان عدالت میں پیش کررکھا تھا۔گزشتہ روز عدالت میں مقدمہ مدعی کے ساتھ راضی نامہ ہونے پر فاضل جج نے ملزم خبیب ظفر کو بری کرنے کا حکم جاری کردیا ہے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -