313لگژر ی درآمدی اشیاء پر ریگو لیٹری ڈیوٹی سے ملکی معیشت تباہ ہو جائیگی تاجر تنظیمیں

313لگژر ی درآمدی اشیاء پر ریگو لیٹری ڈیوٹی سے ملکی معیشت تباہ ہو جائیگی تاجر ...

  

لاہور ( اسد اقبال)ملک کے ممتاز صنعتکاروں اور تاجروں نے وزارت تجارت کی جانب سے 313 لگژری درآمدی اشیاء پر ریگو لیٹری ڈیو ٹی عائد کر نے کو یکسر مستر د کر تے ہوئے کہا ہے کہ یہ ٹیکس منی بجٹ کے مترادف ہے جو تاجروں و صنعتکاروں کو معاشی طور پر کمزور کر کے ملکی معیشت کو تباہی کے دھانے پر پہنچا دے گا جبکہ مہنگائی کا طوفان غریب کی زندگی مذید اجیرن اور قوت خرید جواب دینے سے جرائم کی شرح میں اضافہ کے ساتھ ساتھ چھو ٹی انڈسٹری پر منفی اثرات مر تب ہو نگے ۔حکومت وقت نے تاجروں و صنعتکاروں کو اعتماد میں لیے بغیر اشیاء پر 5سے 10فیصد ڈیو ٹی عائد کی جس کی بھر پور مذمت کر تے ہیں ۔ حکو مت کے اس اقدام سے سمگلنگ کی شر ح میں اضافہ ہو گا اور پاکستانی مینوفیکچرنگ متاثر ہو گی ۔وفاقی حکو مت انڈسٹری کو ریلیف اور ملکی معیشت کر پروا ن چڑھانے کے لیے منی بجٹ کو واپس لے ۔ پاکستان سے گفتگو کر تے ہوئے فیڈریشن آف پاکستان چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹر ی پنجاب کے وائس چیئر مین حمید اختر چڈھا ، انجمن تاجران پاکستان کے مرکزی جنرل سیکرٹری نعیم میر ، قومی تاجر اتحاد کے جنرل سیکر ٹری حافظ عابد علی ، پاکستان پبلشرز ایسو سی ایشن کے رہنماء ابو ذر غفاری ، لاہور چیمبر آف کامر س اینڈ انڈسٹر ی کے صدر شیخ ارشد ، ایگزیکٹو ممبر عدنان بٹ ، انجمن تاجران پاکستان کے صدر خالد پرویز ، صدر لاہور مجاہد مقصو د بٹ ، ویمن چیمبر آف کامر س اینڈ انڈسٹری کی صدر ارم شاہین ، مرکزی رہنماء ڈاکٹر شہلا جاوید ، دی انجینئر ز پاکستان کے جنرل سیکر ٹری سلیم اللہ سعید ، گو جرانوالہ چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر سمیع اللہ ،لاہور ٹر یڈرز الائنس کے صدر صفدر بٹ ،فیرا کے وائس چیئر مین شاہ زیب اکر م ، پاکستان سمال ٹر یڈرز کے صدر بابر بٹ اور پاکستان فلور ملز ایسو سی ایشن کے مرکزی رہنماء عاصم رضا نے کہا کہ وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے منی بجٹ پیش کر کے ملک میں مہنگائی میں اضافے کی نئی تاریخ رقم کی ہے جس سے حکو متی اخراجات تو پورے پو رے ہو جائیں گے تاہم ملکی انڈسٹر ی پر منفی اثرات مر تب ہو نے سے زرمبادلہ کے زخائر میں کمی واقع ہو گی ۔ انھوں نے کہا کہ 40 ارب روپے جمع کرنے کے لئے 5 سے11 فیصد تک درآمدی اشیا پر ریگولیٹری ڈیوٹی لگنے سے سمگلنگ اور انڈر انوائسنگ کو بھرپور تقویت ملے گی۔ صنعتکار و تاجر پہلے ہی معاشی بدحالی کا شکارہیں۔ قوت خرید کم ہونے سے معیشت جمود کا شکار ہو جائے گی۔انھوں نے کہا کہ حکومت کسٹم ڈیوٹی ان آئٹموں پر بڑھا رہی ہے جن کی سمگلنگ زیادہ ہے تاکہ ان اشیاء کی سمگلنگ میں اضافہ اور کسٹم حکا م زیادہ سے زیادہ فائدہ اٹھاسکیں۔یہ کسٹم حکام کا گورکھ دھندہ ہیں اور جو تاجر قانونی طریقہ اور ایمانداری سے ٹیکس ادا کرکے بیرون ممالک سے اشیاء منگواتے ہیں انہی پر ڈیوٹی کی شرح میں اضافہ کردیا گیا جو تاجروں کیلئے ناقابل قبول ہے ۔حکومت قانونی طریقہ اور ٹیکس کی ادائیگی کے بغیر اشیاء کی درآمدات ختم کرنا چاہتی ہیں جبکہ سمگلر یہی مال انتہائی کم قیمت پر مارکیٹ میں سپلائی کرینگے جس کی وجہ سے ایماندار تاجر برادری اشیاء کی قیمتوں میں ان کا مقابلہ نہیں کرسکے گی اور انہیں مالی مشکلات کاسامنا کرنا پڑے گا ۔رہنماؤ ں کا کہنا ہے کہ حکو مت بجٹ خسارہ پورے کر نے کے لیے اپنے شاہی خرچے کم کرے تاکہ معیشت کا پہیہ رواں اور انڈسٹر ی پھل پھو ل سکے ۔انھوں نے کہا کہ تاجر و صنعتکار وزارت خزانہ کی جانب سے پیش کیے جانے والے منی بجٹ کو یکسر مستر د کر تے ہیں اور مطالبہ کر تے ہیں کہ حکو مت اس فیصلے کو واپس لے۔

مزید :

صفحہ اول -