ملٹری پولیس پر حملہ اور شہادت افسوسناک اور قابل مذمت ہے،حافظ نعیم الرحمن

ملٹری پولیس پر حملہ اور شہادت افسوسناک اور قابل مذمت ہے،حافظ نعیم الرحمن

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے ایم اے جناح روڈ پر ملٹری پولیس پر حملے اور دو اہلکاروں کی شہادت پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا اس واردت کو انتہائی افسوس ناک اور قابل مذمت قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ یہ واردات کراچی کے حالات کو خراب کرنے اور5دسمبر کو ہونے والے بلدیاتی انتخابات کو سبوتاژ کرنے کی سازش ہے۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ کراچی میں دہشت گردوں ،ٹارگٹ کلرزاور جرائم پیشہ عناصر کے خلاف کاروائیاں تیز کی جائیں ۔حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ کراچی میں بلدیاتی انتخابات سے چند روز قبل دہشت گردی کی یہ کاروائی حکومت اور سیکورٹی اداروں کے لیے ایک بڑا چیلنج ہے ۔اس کاروائی میں ملوث عناصر کی گرفتاری کو فی الفور یقینی بنایا جائے اور ان کو سخت سزا دی جائے ۔حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ کراچی میں دہشت گردوں ،ٹارگٹ کلرز اور’’ را‘‘ کے ایجنٹوں کو جب تک قرار واقعی سزا نہیں دی جائے گی حقیقی طور پر قیام امن بہت مشکل ہے ۔بعض عناصر کراچی کے حالات کو مسلسل خراب رکھنا چاہتے ہیں اور اس شہر کو ترقی اور خوشحالی کی راہ میں پیچھے دھکیلنا چاہتے ہیں ۔حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ ان ہی حالات کے پیش نظر ہمارا مطالبہ ہے کہ 5دسمبر کو ہر پولنگ اسٹیشن کے اندر اور باہر فوج یا رینجرز کے اہلکاروں کو تعینات کیا جائے تاکہ بلدیاتی انتخابات آزادانہ ،پُرامن ،منصفانہ اور صاف و شفاف ہوسکیں ۔حافظ نعیم الرحمن نے شہید اہلکاروں کے لیے دعائے مغفرت اور ان کے اہل خانہ کے لیے صبر جمیل کی دعا کی ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -