خاتون تحصیل کونسلر کی نااہلی کیخلاف حکم امتناعی

خاتون تحصیل کونسلر کی نااہلی کیخلاف حکم امتناعی

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ نے چھوٹالاہورصوابی کی خاتون تحصیل کونسلر کی نااہلی کے خلاف حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے الیکشن کمیشن اورمحکمہ بلدیات سے جواب مانگ لیاہے عدالت عالیہ کے جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس روح الامین پرمشتمل دورکنی بنچ نے بیرسٹروقار کی وساطت سے دائرتحصیل کونسلرچھوٹالاہورصوابی نورجہاں کی اپیل کی سماعت کی تو اس دوران انہوں نے عدالت کو بتایا کہ اس کی موکلہ مسلم لیگ ن کی نشست پر تحصیل کونسلر منتخب ہوئی تاہم انہوں نے پارٹی فیصلے کے خلاف پاکستان تحریک انصاف کے تحصیل نظامت کے ا میدوار کو ووٹ دیا جس پر اس کی پارٹی نے لوکل گورنمنٹ ایکٹ کی دفعہ78اے کے تحت اس کی نااہلی کے لئے الیکشن کمیشن کوریفرنس بھجوایا جس پر ا نہیں نااہل قرار دیاگیا انہوں نے عدالت کو دلائل دئیے کہ ان کی موکلہ کو کسی امیدوارکو ووٹ دینے سے متعلق ہدایت نہیں دی گئی تھی جبکہ جس قانون کے تحت اس کی نااہلی کی گئی ہے وہ لوکل گورنمنٹ الیکشن کے بعد آیاہے اس بناء یہ فیصلہ درخواست گذارہ پرنافذالعمل نہیں ہے کیونکہ یہ ترامیم اگست2015میں ہوئی ہیں جس پرفاضل بنچ نے الیکشن کمیشن کے فیصلے کو معطل کرتے ہوئے جواب مانگ لیا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -