امریکہ کا داعش کیخلاف فورسز بھیجنے کا بیان ، کسی غیرملکی بری فوج کی ضرورت نہیں : عراقی وزیراعظم حیدرالعبادی

امریکہ کا داعش کیخلاف فورسز بھیجنے کا بیان ، کسی غیرملکی بری فوج کی ضرورت ...
امریکہ کا داعش کیخلاف فورسز بھیجنے کا بیان ، کسی غیرملکی بری فوج کی ضرورت نہیں : عراقی وزیراعظم حیدرالعبادی

  

بغداد(مانیٹرنگ ڈیسک) عراق میں داعش کیخلاف کارروائی میں عراقی فورسز کی مدد کیلئے امریکہ کے خصوصی دستے بھیجنے کے اعلان پر عراقی وزیر اعظم حیدر العبادی نے کہا ہے کہ ان کے ملک کو غیر ملکی بری فوج کی ضرورت نہیں ہے۔

ایک سرکاری بیان میں حیدرالعبادی نے کہا کہ عراق کے کسی مقام پر غیر ملکی خصوصی یا کسی بھی نوعیت کے فوجی دستوں کی تعیناتی بغداد حکومت کی اجازت اور کوارڈی نیشن کے بغیر ممکن نہیں، ہر کسی کو عراق کے اقتدار اعلیٰ کا خیال رکھنا ہو گا۔

یادرہے کہ امریکی وزیردفاع آشٹن کارٹر نے کانگریس کی آرمڈ سروسز کمیٹی میں کہاتھاکہ امریکہ عراق میں داعش کے خلاف جنگ کے لیے خصوصی آپریشنز فورسز کے دستے بھیجے گا جو شام کے سرحدی علاقے میں بھی جہادیوں کے خلاف کارروائیاں کرسکیں گے۔العربیہ کے مطابق انہوں نے بتایا کہ خصوصی سریع الحرکت فورس عراقی اور کرد فورسز البیشمرکہ کی مدد کے لیے تعینات کی جائے گی مگر انہوں نے یہ نہیں بتایا ہے کہ عراق بھیجے جانے والے ان خصوصی فوجیوں کی تعداد کیا ہوگی۔پنیٹاگان کے سربراہ کاکہناتھاکہ یہ خصوصی دستے وقت کے ساتھ چھاپہ مار کارروائیاں کرسکیں گے ،یرغمالیوں کو رہا کراسکیں گے ،انٹیلی جنس معلومات اکٹھی کریں گے اور داعش کے لیڈروں کو پکڑیں گے،یہ فورس شام کے اندر بھی یک طرفہ طور پر کارروائیاں کرسکے گی۔

مزید :

بین الاقوامی -