لاہور ائیرپورٹ پر طیاروں کی لینڈنگ کیلئے نصب جدید ترین سسٹم بھی شدید دھند کے سامنے فیل ،وجہ بھی سامنے آگئی

لاہور ائیرپورٹ پر طیاروں کی لینڈنگ کیلئے نصب جدید ترین سسٹم بھی شدید دھند کے ...
لاہور ائیرپورٹ پر طیاروں کی لینڈنگ کیلئے نصب جدید ترین سسٹم بھی شدید دھند کے سامنے فیل ،وجہ بھی سامنے آگئی

  

لاہور( مانیٹرنگ ڈیسک) لاہور ائیرپورٹ پر طیاروں کی لینڈنگ کیلئے نصب کیا گیا جدید ترین سسٹم بھی شدید دھند کے سامنے فیل ہوگیا اور دوانٹرنیشنل پروازوں سمیت طیارے لینڈنہیں کرسکے اور بیشتر پروازیں کراچی منتقل کردی گئیں تاہم نجی ٹی وی چینل کاکہناہے کہ جدید ترین سسٹم کی ناکامی کی وجہ سے طیاروں میں نصب سسٹم بناکیونکہ وہ اپ ڈیٹ نہیں تھا۔

تفصیلات کے مطابق لندن روانگی سے قبل علامہ اقبال انٹرنیشنل ائیرپورٹ پر وزیر اعلیٰ پنجاب نے قطر کی طرف سے تحفے میں دیے گئے جدید ترین لینڈنگ سسٹم اے ایس ایل تھری کا افتتاح کیا تھا جس کے ذریعے ایئرپورٹ پر 50میٹر حد نگاہ تک طیارے لینڈ کرسکتے ہیں مگر قطر کی طرف سے دیا گیا جدید ترین لینڈنگ سسٹم ناکام ہوکر رہ گیا ہے ۔ لاہور اور گردونواح میں شدید دھند کی وجہ سے علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئرپورٹ رن وے پر حد نگاہ 300میٹر تھی لیکن لینڈنگ سسٹم ناکام ہونے کی وجہ سے 2انٹرنیشنل فلائٹس رن وے پر لینڈ نہ کرسکیں۔ ائیرپورٹ حکام نے دوحہ سے آنیوالی قطر ائیر لائن کی پرواز 628کو کراچی جبکہ شارجہ سے لاہور پہنچنے والی پرواز کو اسلام آباد بھجوادیا ہے ۔

اے آر وائے نیوز کے مطابق اس سسٹم کی ناکامی کی وجہ سامنے آگئی ہے اور ایئرپورٹ ذرائع نے بتایاکہ نصب کیاگیانیا سسٹم کارآمد ہے لیکن طیاروں کے اندر موجود سسٹم اپ ڈیٹ نہیں تھا جس کی وجہ سے طیاروں کی لینڈنگ نہیں ہوسکی اور کسی قسم کا خطرہ مول نہیں لیاگیا۔ 

مزید :

لاہور -