کنو کاریٹ آٹھ سو روپے فی من مقر ر کرنے پر اتفاق

کنو کاریٹ آٹھ سو روپے فی من مقر ر کرنے پر اتفاق

سرگودھا(اے پی پی )کنو گروئرز ایسوسی ایشن اور کنو فیکٹری مالکان کے باہمی اتفاق رائے اور مشاورت سے امسال کنو کاریٹ آٹھ سو روپے فی من مقر ر کر دیاگیاہے ،جس پر دونوں سٹیک ہولڈر نے رضا مندی کا اظہار کرتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیاکہ وہ کنو کی برآمدات میں اضافے اور فی ایکڑ پیداوار میں اضافے کیلئے مشترکہ اقدامات کریں گے ۔ اس امر کا فیصلہ ڈسٹرکٹ کوآرڈی نیشن آفیسر سرگودہا دانش افضال کی زیرِ صدارت کنو گروئرز اور کنو فیکٹری مالکان کے اجلاس میں کیاگیا ۔جس میں فریقین نے آپس میں باہمی مشاورت سے کنو کے ریٹ مقرر کئے ۔ اجلاس میں کنو گروئرز ایسوسی ایشن کے صدر چوہدری حامد سلیم وڑائچ ‘ ملک خیر محمد ٹوانہ ‘ سید منیر حسین شیرازی ‘ میاں خالد افضل ‘ عابد ممتاز وڑائچ کے علاوہ کنو فیکٹری مالکان کی نمائندگی راؤ عبدالقیوم ‘ انصر اقبال ہرل اور ماجد بسرا نے شرکت کی ۔

اجلاس میں اس امر پر اتفاق کیاگیا کہ کنو گروئرز کا استحصال کسی قیمت پر برداشت نہیں کیاجائے گااور اجلاس میں کنو کی ابتدائی قیمت خرید آٹھ سو روپے فی من کے حصول کو یقینی بنایا جائے گا ۔اس میں کسی قسم کی کوئی کمی کی گنجائش نہیں ہو گی اور کنو کے فی من ریٹ یکساں آٹھ سو روپے ہی نافذ العمل ہوں گے جس میں کسی قسم کی کٹوتی او رکمی کی اجازت نہیں ہو گی اور اس طرح کنو گروئرز کو ان کی فصل کا مقررکردہ ریٹ دیا جائے گا ۔ اجلاس میں کنو گروئرز اور فیکٹری مالکان نے کنو کے ریٹ پر اتفاق کرتے ہوئے ضلعی انتظامیہ کو یقین دلایاکہ وہ اجلاس میں باہمی اتفاق رائے سے کئے گئے فیصلے سے کسی صورت انحراف نہیں کریں گے ۔ ڈی سی او دانش افضال نے کنو گروئرز او رفیکٹری مالکان کے مابین باہمی صلاح مشورے اور اتفاق رائے سے کنو کے فی من آٹھ سو روپے کے فیصلے کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے توقع ظاہر کی کہ اس فیصلے سے فریقین کے درمیان کشیدگی اور بے چینی کی فضا ختم ہو گی او روہ ضلع سے کنو کی برآمدات میں اضافے کے ذریعے ملکی زرمبادلہ میں اضافے کو یقینی بنانے کیلئے اپنا قومی اور اخلاقی فریضہ انجام دیں گے ۔ ڈی سی او نے سٹریس ریسرچ انسٹیٹیوٹ کو کنو کی کوالٹی ‘ پیداوار اور بیماریوں سے پاک کنو کی برآمدات میں اضافے کیلئے مشترکہ اقدامات کرنے کی ضرورت پر زور دیا ۔

مزید : کامرس