حکومت ‘ اپوزیشن میں شامل کرپٹ عناصر کا بلاامتیاز احتساب ہونا چاہیے ‘ لیاقت بلوچ

حکومت ‘ اپوزیشن میں شامل کرپٹ عناصر کا بلاامتیاز احتساب ہونا چاہیے ‘ لیاقت ...

ملتان(جنرل رپورٹر)حکومت اور اپوزیشن میں کرپٹ عناصر کابلا تفریق احتساب ہونا چاہئے۔آئین وقانون کے مطابق افواج کے سپہ سالارکی تبدیلی خوش آئند ہے ۔ ان خیا لات کا اظہار ملتان میڈیا سنٹر میں جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی نائب امیر وچیئر مین سیاسی کمیٹی میاں محمد اسلم کے ہمراہ پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ جماعت اسلامی پنجاب کے رہنما ملک محمد(بقیہ نمبر47صفحہ12پر )

رمضان روہاڑی ، ضلعی امیر میاں منیر احمد بودلہ، امیر ملتان شہر میاں آصف محمود اخوانی ، الخدمت فاؤنڈیشن پنجاب کے صدر راؤ محمد ظفر ، ضلعی صدر ڈاکٹر صفدر اقبال ہاشمی، میڈیا ایڈوائزر کنور محمد صدیق بھی موجود تھے۔انہوں نے مزید کہا پاکستانی فوج کی کمانڈ کی تبدیلی خوش آئند بات ہے اس وقت ملک کی سرحد یں خطرات سے دوچار اور نئے آرمی چیف کو بڑے چیلنجز کا سامنا ہوگا ۔ جنرل راحیل شریف نے مدت ملازمت میں توسیع نہ لے کر اپنی اور فوج کی عزت کو بڑھا یا ہے ۔انہوں نے ایوب، یحٰیی ، ضیاء الحق اور مشرف کے دور کے برے اثرات کو صاف کیا ہے ملک کے تمام ریاستی اداروں کو قانون کے مطابق اختیارات کا استعمال کرنا چاہئے ۔بھارتی عوام نے نریندر مودی سے توقعات وابستہ کیں تھیں۔ بھارت خود اس وقت بحرانوں سے دوچار ہے اندرونی انتشار بھارتی برہمنوں کیلئے وبال جان بنا ہوا ہے اس وقت بھارتی فوج کشمیریوں کے عزم کے سامنے بے بس ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی پر اس وقت جنگی جنون سوار ہے اور یہ نریندر مودی بھارت کیلئے گوربا چوف ثابت ہوگا۔ پاک چائنہ اقتصادی راہداری منصوبہ خطے کیلئے نہایت اہمیت کا حامل ہے۔ منصوبہ کسی ایک پارٹی کا منصوبہ نہیں تمام پاکستانیوں کا منصوبہ ہے ۔ وفاقی حکومت کی ذمہ داری ہے ۔ انصاف اور قومی یکجہتی پیرا میٹر کیساتھ عمل درآمد کرکے قومی وسائل کا منصفانہ تقسیم کی جائے ۔ مردم شماری نہ کروانا حکمرانوں کی نا اہلی ہے نیشنل فنانس ایوارڈ کا فیصلہ بھی نہیں کرسکی۔ میٹروبس کا منصوبہ اچھا حکمران ملتان کے عوام کو تر سارہے ہیں ، ان منصوبوں کواپنی سیاست کیلئے استعمال نہ کیا جائے۔ ملتان ، ڈیرہ غازی خان کے درمیان موٹر وے بنائی جائے ۔ مٹھن کوٹ کے مقام پر غازی گھاٹ پل التواء کا شکار ہے اس کو مکمل کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ اسمبلی میں18سال سے کم عمر میں اسلام قبول پر پابندی کا بل منظور کرنا سراسر اسلام اور آئین پاکستان کے خلاف ہے جس کی ہم پر زور مذمت کرتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اس سلسلہ میں دینی جماعتوں کا ایک اہم اجلاس 6 دسمبر کو کراچی میں ہوگا ۔ بعد ازاں لاہور، پشاور، اسلام آباد میں بھی اجلاس ہونگے۔ جس میں حکمت عملی طے کی جائے گی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر