انصاف صحت سہولت سکیم غریب عوام کیلئے انقلابی منصوبہ ہے ، محمد عاطف

انصاف صحت سہولت سکیم غریب عوام کیلئے انقلابی منصوبہ ہے ، محمد عاطف

مردان ( بیورورپورٹ) صوبائی وزیر ابتدائی وثانوی تعلیم و برقیات محمد عاطف خان نے کہا ہے کہاہے کہ انصاف صحت سہولت سکیم غریب عوام کے لیے موجودہ صوبائی حکومت کا ایک انقلابی منصوبہ ہے جس سے صوبے کی اکیاون فیصد آبادی کو بہترین اورمفت علاج معالجے کی سہولت میسر ہوگی اوراس منصوبے کے آنے کے بعد غریب لوگوں کو اپنے پورے خاندان کے علاج معالجے کے لیے کسی بھی پریشانی سے نجات مل جائے گی ۔وہ پختونخوا ہاؤس مردان میں ضلع مردان صحت انصاف پروگرام کے تحت صحت سہولت کارڈز کی تقسیم کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ تقریب سے صوبائی اسمبلی کی ڈپٹی سپیکر ڈاکٹر مہر تاج روغانی نے بھی خطاب کیا ، اس موقع پر صوبائی اسمبلی کے ارکان زاہد درانی ، افتخار علی مشوانی ، طفیل انجم ،تحصیل ناظم مردان حاجی ایوب خان اور ڈپٹی کمشنر مردان ڈاکٹر عمران حامد شیخ بھی موجود تھے ۔منصوبے کی تفصیلات بیان کرتے ہوئے سالک فاؤنڈیشن کے جہانزیب سالک نے بتایا کہ ضلع مردان ایک لاکھ تین ہزار غریب خاندانوں کو صحت سہولت کارڈ جاری کئے جارہے ہیں جس سے فی خاندان مختلف سرکاری اور نجی ہسپتالوں سے سالانہ پانچ لاکھ چالیس ہزارر وپے تک کی علاج معالجے کے اخراجات حکومت برداشت کرے گی۔ اُنہوں نے کہا کہ کارڈ کے ذریعے مفت ڈیلیوری کے علاوہ ہسپتال سے واپسی پر مریض کو ٹرانسپورٹ اخراجات کے لیے ایک ہزار روپے نقد بھی فراہم کیے جائیں گے اور عام مریض کو ہسپتال میں داخلے کی صورت میں تین دن روزانہ مفت علاج اور مفت ادویات کے ساتھ ساتھ روزانہ ڈھائی سو روپے نقد بھی دئیے جائیں گے ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے محمد عاطف خان نے کہا کہ صحت سہولت کارڈ کا اجراء کسی سیاسی وابستگی کے بغیر بلاامتیاز کیا جارہاہے اورجہاں کہیں بھی کوئی ناانصافی ہوگی اس کا فوری ازالہ کیا جائے گا ۔اُنہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت نے جہاں تعلیمی شعبے میں اصلاحات کئے ہیں وہاں صحت کے شعبے میں بھی دور رس اصلاحات متعارف کرائی جارہی ہیں اور ہسپتالوں میں علاج معالجے کی سہولتیں بہتر بنانے کے ساتھ ڈاکٹروں کی حاضری یقینی بنانے کے لیے بھی اقدامات کئے گئے ہیں ۔ عاطف خان نے کہا کہ ہماری حکومت تبدیلی کے وعدے پر برسر اقتدار آئی اور گذشتہ تین سال کے دوران تعلیم ،صحت ، پولیس ، پٹوار اور دیگر شعبوں میں آنے والی تبدیلی واضح ہے ۔اُنہوں نے کہا سکولوں میں ضروری سہولیات کی فراہمی پر اکیس ارب روپے کی خطیر رقم خرچ کی گئی ہے جبکہ چودہ لاکھ بچوں کو کلاس رومز میں بیٹھنے کے لیے کرسیوں کی فراہمی پر چار ارب روپے خرچ کئے گئے ہیں ۔مردان کے ترقیاتی منصوبوں کا ذکر کرتے ہوئے عاطف خان نے کہا کہ ویمن یونیورسٹی میں کلاسز کا اجراء ہوچکا ہے جبکہ ملک کے سب سے پہلے گرلز کیڈٹ کالج کے لیے زمین حاصل کی جاچکی ہے اور عارضی بنیادوں پر کلاسز کے لیے عمارت بھی حاصل کی جاچکی ہے ۔مردان میں تین فلائی اوورز کا ڈیزائن فائنل ہوچکا ہے جبکہ چوکوں کی توسیع سمیت مردان ترقیاتی منصوبوں، کلچرل سینٹر اور فوڈ سٹریٹ کے لیے ایک ارب روپے کی خطیر رقم سے مردان اپ لفٹ پروگرام شروع کیا جارہا ہے ۔بعدازاں عاطف خان ،ڈپٹی سپیکر ڈاکٹر مہرتاج روغانی اور ارکان صوبائی اسمبلی نے مستحق افراد میں صحت کارڈ تقسیم کر کے منصوبے کا باضابطہ افتتاح کیا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ اول