پوپ فرانسس کا دورہ بنگلہ دیش،روہنگیا مسلمانوں پرہونیوالی ظلم پر معافی مانگ لی

پوپ فرانسس کا دورہ بنگلہ دیش،روہنگیا مسلمانوں پرہونیوالی ظلم پر معافی مانگ ...
پوپ فرانسس کا دورہ بنگلہ دیش،روہنگیا مسلمانوں پرہونیوالی ظلم پر معافی مانگ لی

  

ڈھاکہ ( آن لائن)پوپ فرانسس نے میانمار سے بے گھر ہونے والے مسلمانوں پر ہونے والے ظلم پر معافی مانگتے ہوئے ان کو حقوق دینے کا مطالبہ کیاہے۔تفصیلات کے مطابق دورہ بنگلہ دیش کے دوران پوپ فرانسس نے بنگلہ دیش میں موجود روہنگیا مسلمانوں کے ایک گروپ سے ملاقات کی اور ان کی دکھ بھری کہانی سنی اور ان کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

بنگلہ دیش کے سرحدی علاقے کوکس بازار میں قائم مہاجرکیمپ سے 12 مرد، 2 خواتین اور 2 کم سن لڑکیوں سمیت 16 روہنگیا افراد دارالحکومت ڈھاکا پہنچے، تمام اراکین نے انفرادی طور پر پوپ فرانسس سے ملاقات کی اور بچوں اور جوانوں کو حوصلہ دیا،پوپ فرانسس کا کہنا تھا کہ ہوسکتا ہے کہ ہم آپ کے لیے زیادہ کچھ نہ کرسکیں لیکن آپ کا دکھ ہمارے دلوں میں ہے،انھوں نے بھرائی ہوئی آواز میں کہا کہ ان تمام افراد کی جانب سے جنھوں نے آپ کو سزا دی، جنھوں نے آپ کو دکھ پہنچایا اور دنیا کی بے حسی پر میں آپ سے معافی کا خواست گار ہوں، پوپ فرانسس نے روہنگیا مہاجرین کے حقوق کو مسلمہ قرار دیتے ہوئے اس کو اجاگر کرتے رہنے کا اعادہ کیا اور بنگلہ دیش کو ان مہاجرین کی مدد پر بڑے دل کا مظاہرہ قرار دیتے ہوئے مزید مدد جاری رکھنے کی اپیل کی۔پوپ فرانسس کی جانب سے روہنگیا نہ کہنے کے معاملے پر روہنگیا مسلمان افراد ان سے ملنے ڈھاکا پہنچے اور انھیں ان کی شناخت کے اعتراف پر زور دیا۔پوپ فرانسس نے ان افراد کی آمد پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ آپ کی عزت افزائی کا شکریہ اور اس سے چرچ سے آپ کی محبت کا بھی اظہار ہوتا ہے۔

مزید : بین الاقوامی