داعش نے یرغمال شامی پائلٹ بے رحمی سے زندہ جلا ڈالا

داعش نے یرغمال شامی پائلٹ بے رحمی سے زندہ جلا ڈالا
داعش نے یرغمال شامی پائلٹ بے رحمی سے زندہ جلا ڈالا

  

بیروت(این این آئی)دہشت گرد تنظیم داعش نے ایک سال قبل یرغمال بنائے گئے شامی جنگی پائلٹ کو نہایت بے رحمی کے ساتھ زندہ جلادیااورتصاویربھی جاری کردیں۔

عرب ٹی وی کے مطابق داعش کے مقرب ذرائع ابلاغ پر شائع کی گئی تصاویر میں کیپٹن ’’ عزام عید ‘‘ کو ایک درخت کے ساتھ زنجیروں سے جکڑے دکھایا گیااور اسے سرخ لباس پہنایا گیا ہے۔داعش کی جانب سے جاری کردہ ایک فوٹیج میں ایک جنگجو کو شامی پائلٹ عزام عید کو زنجیروں میں جکڑتے دکھایا گیا ہے۔ اس کے بعد اس پر تیل چھڑک کر آگ لگا دی جاتی ہے، وہ شدت تکلیف سے مدد کے لیے پکارتا ہے۔ اس طرح آگ کے شعلوں کی لپیٹ رہنے کی کچھ دیر بعد وہ جل کر کوئلہ بن جاتا ہے۔یہ معلوم نہیں کہ آیا شامی پائلٹ کو کب اور کہاں زندہ جلایا گیا تاہم اسے داعش نے ایک سال قبل یرغمال بنایا تھا۔

واضح رہے کہ داعش نے اپریل 2016ء کو مشرقی دمشق کے قریب ایک جنگی طیارے کی تصاویر جاری کی تھیں جسے مار گرانے کا دعویٰ کیا گیا تھا۔ داعش نے اس طیارے کے کپتان عزام عید کو یرغمال لیا تھااور اس کے بعد ان کا کوئی علم نہیں تھا۔شامی پائلٹ کی طرح داعش اردنی پائلٹ معاذ الکساسبہ کو بھی زندہ جلا کر موت کے گھاٹ اتار چکی ہے۔ الکساسبہ کو شمالی شام کے الرقہ شہر میں جنوری 2014ء کو اس کا ’ایف 16‘ طیارہ مار گرائے جانے کے بعد یرغمال بنایا گیا تھا۔

مزید : بین الاقوامی