سندھ میں بدعنوان عناصر کیخلاف کارروائیاں مزید تیز کرنے کا فیصلہ 

  سندھ میں بدعنوان عناصر کیخلاف کارروائیاں مزید تیز کرنے کا فیصلہ 

  



کراچی(آئی این پی) سندھ کے وزیر برائے اینٹی کرپشن، آبپاشی  اور  زکوۃ و عشر سہیل انور سیال نے سندھ میں  بدعنوان عناصر کے خلاف کارروائیاں مزید تیز کرنے کا عندیہ دے دیا ہے۔  کرپٹ اداروں و افراد کا احتساب جاری رہے گا جبکہ اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے والے افسران و عملہ کے خلاف بھی ضابطہ کے مطابق  کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔محکمہ اینٹی کرپشن و اسٹیبلشمنٹ کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے سہیل انور سیال  نے محکمے کے افسران سے بریفنگ لی اور صوبے بھر میں بدعنوانی کے خلاف کی جانے والی کارروائیوں کے تمام ریکارڈز،اعدادوشمار اور مقدمات کے چالان کی تفاصیل کو مرتب کرکے ڈیٹا کی شکل میں محفوظ رکھنے کے احکامات بھی جاری کیے _دوران اجلاس محکمہ کے افسران نے صوبائی وزیر کو محکمہ اینٹی کرپشن سندھ کی حوصلہ افزا کارکردگی پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ صوبے بھر میں بدعنوان عناصر کے خلاف چھاپہ مار کاروائیاں کی جارہی ہیں جس کے نتیجے میں  محکمہ پر عوام کا اعتماد مزید بہتر اور بحال ہورہا ہے۔جس پر صوبائی وزیر سہیل انور سیال نے کہا کہ  بلاتفریق کارروائیوں پر محکمہ اینٹی کرپشن کا عوام کے سامنے مثبت تاثر اجاگر ہونا  خوش آئند امر ہے۔صوبائی وزیربرائے اینٹی کرپشن نے دوران اجلاس اضلاع میں سرکل آفیسر کی خالی اسامیوں کو فوری  پر کرنے کے بھی احکامات جاری کرتے ہوئے کہا کہ تمام سرکل آفیسر اپنے اضلاع میں متحرک رہیں اور بدعنوان عناصر کے خلاف ملنے والی شکایات پر تحقیقات  کے بعد قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے کاروائی عمل میں لائں۔ سندھ کے وزیر برائے اینٹی کرپشن،آبپاشی اور زکوۃ و عشر سہیل انور سیال نے مزید کہا کہ محکمہ اینٹی کرپشن کے افسران و عملہ جو چھاپہ ماریں اس کو عدالت میں ثابت کرنے کے لیے تمام مطلوبہ دستاویزات اور ثبوت و شواہد کو بروقت عدالت میں پیش کریں جبکہ کسی بھی مقدمے کا چالان جمع کرانے میں سست روی برداشت نہیں کی جائے گی۔

سندھ فیصلہ

مزید : علاقائی