بھار ت دنیا کی سب سے بڑی دہشتگردی کا مرتکب، تحریک آزادی کشمیر کو دبا نہیں سکتا: گورنر پنجاب 

بھار ت دنیا کی سب سے بڑی دہشتگردی کا مرتکب، تحریک آزادی کشمیر کو دبا نہیں ...

  



لزبن، لاہور(نیوز ایجنسیاں) گورنر پنجاب محمد سرور دو روزہ سرکاری دورہ پر گزشتہ روز پرتگال کے دارالحکومت لزبن پہنچے تو ائیر پورٹ پر ان کا پر تپاک استقبال کیا گیا۔ ائیر پورٹ پر سفیر پاکستان اور کمیونٹی راہنماؤں نے سید خالد عباس، راجہ زاہد اقبال، سرفراز فرانسس، عمران شاکر، شیخ عمر، محمد سہیل اور دیگر نے  پھولوں کے گلدستے پیش کئے اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستانی تارکین وطن ہمارا سرمایہ ہیں ان کی مشکلات کے سد باب کیلئے عدالتی نظام میں بہتری کی گئی ہے اور اوورسیز کمیشن میں بھی تبدیلیاں لائی گئیں ہیں تا کہ انصاف اور تحفظ کے نظام میں بہتری کے اثرات عوام تک پہنچیں۔ملک میں سیاحت کے فروغ کے لیے حکومت اقدامات کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ22ہزار خواتین کو بیوہ جبکہ 11ہزار خواتین کی بے حرمتی کرکے بھارتی افواج مقبوضہ کشمیر میں دنیا کی سب سے بڑی دہشت گردی اور انسانیت کا قتل عام کر رہی ہے۔اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں کو مسئلہ کشمیر پر اپنی خاموشی ختم کر نا ہوگی۔ بھارتی افواج کے مظالم کی وجہ سے مقبوضہ کشمیر میں تیس سالوں کے دوران 1ہزار خواتین سمیت 95ہزار سے زائد افراد شہید ہو چکے ہیں اور ہزاروں بے گناہ کشمیری آج بھی جیلوں میں قید ہیں مگر اسکے باوجود کشمیر یوں کی تحر یک آزادی میں جذبہ کم نہیں ہو سکا بلکہ ہر گزارتے دن کیساتھ کشمیر یوں کی تحر یک آزادی پہلے سے زیادہ مضبوط ہو رہی ہے۔اُنہوں نے کہا کہ کشمیر آج بھی پاکستان کی شہ رگ ہے کشمیر پاکستان اور پاکستان کشمیر ہے دونوں کو دنیا کی طاقت جدانہیں کرسکتی۔ اُنہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں پاکستان کے22کروڑ عوام کشمیر یوں کیساتھ کندھے سے کند ھا ملا کر چل رہے ہیں کشمیر کی آزادی کیلئے ہم ہر قربانی دینے کو تیار ہیں۔

گورنر پنجاب

مزید : صفحہ آخر