رواں مالی سال کے پہلے پانچ ماہ بر آمدت4.8فیصد بڑھیں، تجارتی خسارہ ساڑھے 9ارب ڈالر رہا: رزاق داؤد

  رواں مالی سال کے پہلے پانچ ماہ بر آمدت4.8فیصد بڑھیں، تجارتی خسارہ ساڑھے 9ارب ...

  



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)مشیر صنعت و تجارت عبدالرزاق داؤد نے کہا ہے رواں مالی سال کے پہلے 5 ماہ میں برآمدات میں 4.8 فیصد اضافہ ہوا ہے۔اپنے بیان میں عبدالرزاق داؤد کا کہنا تھا رواں مالی سال کے پہلے 5 مہینوں میں پاکستانی برآمدات کا حجم 9 ارب 55 کروڑ ڈالر رہا، گزشتہ سال اسی عرصے میں پاکستانی برآمدات کا حجم 9 ارب 11 کروڑ ڈالر تھا۔انہوں نے کہا کہ رواں مالی سال کے پہلے 5 ماہ میں برآمدات میں 45کروڑ 70 لاکھ ڈالر کا اضافہ ہوا جو کہ 4.8 فیصد ہے۔عبدالرزاق داؤد کا کہنا تھا کہ رواں مالی سال کے پہلے 5 ماہ میں درآمدات کا حجم 19 ارب 4 کروڑ ڈالر رہا جو کہ گزشتہ مالی سال کے پہلے 5 ماہ میں 23 ارب 59 کروڑ ڈالر تھا، گزشتہ مالی سال کے اسی عرصے کے مقابلے میں درآمدات میں 4 ارب 55 کروڑ ڈالر کی کمی ہوئی، مالی سال کے ابتدائی 5 ماہ میں گزشتہ مالی سال کی نسبت درآمدات 19.3 فیصد کم ہوئی۔مشیر تجارت کے مطابق مالی سال کے ابتدائی 5 ماہ میں تجارتی خسارہ 9 ارب 50 کروڑ ڈالر رہا، گزشتہ سال اسی عرصے میں تجارتی خسارہ 14 ارب 48 کروڑ ڈالر تھا اور یہ گزشتہ سال کے اسی عرصے کے تجارتی خسارے میں 4 ارب 98 کروڑ ڈالر کی کمی ہوئی ہے جوکہ 34.42 فیصد ہے۔ روا ں مالی سال نومبر کے دوران برآمدات 2 ارب ڈالر سے زائد رہیں، گزشتہ مالی سال نومبر کے مقابلے میں رواں مالی سال نومبر کے دوران برآمدات میں 9.6 فیصد اضافہ ہوا ہے جبکہ رواں مالی سال نومبر کے دوران تجارتی خسارے میں بھی 17.53 فیصد کمی ہوئی ہے۔دوسری طرف مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد نے اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ ملکی برآمدات کے حوالے سے مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد نے کہا ہے نومبر2019ء میں ملکی برآمدات دو ارب ڈالر سے زائد رہیں۔برآمد کنندگان اور وزارت تجارت کی کاوشیں رنگ لے آئی ہیں،جس کے نتیجے میں برآمدات میں 9.6فیصد اضافہ ہوچکا ہے۔مشیر تجارت نے کہا کہ گزشتہ ماہ دو ارب دو کروڑ ڈالر کی برآمدات ہوئیں۔نومبر2018ء میں ایک ارب84کروڑ ڈالر کی برآمدات کی گئی تھیں جبکہ رواں سال نومبر میں 9.6فیصد اضافے سے17کروڑ70لاکھ کی زائد برآمدات کی گئیں۔

رزاق داؤد

مزید : صفحہ آخر