حوثیوں کی طرف سے اساتذہ اور طلباء کی جاسوسی کا انکشاف

  حوثیوں کی طرف سے اساتذہ اور طلباء کی جاسوسی کا انکشاف

  



صنعاء (این این آئی)یمن کے دارالحکومت صنعاء سے ایک باوثوق ذریعے نے انکشاف کیا ہے کہ ایرانی حمایت یافتہ حوثی باغی جامعہ صنعاء کے اساتذہ اور طلباء کی جاسوسی کرتے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق حوثی ملیشیا نے جامعہ صنعاء کے عملے، اساتذہ اور طلباء کی جاسوسی کیلیے ایک نیٹ ورک بنا رکھا ہے۔ یہ جاسوسی گروپ حوثیوں کی قائم کردہ ڈیفنس انٹیلی جنس فورسز کو ہر ہفتے رپورٹ پیش کرتا ہے۔ اس رپورٹ میں صنعاء یونیورسٹی کے ملازمین، اساتذہ، طلباء اور دیگر افراد کے رحجانات اور سرگرمیوں کے بارے میں بتایا جاتا ہے۔خیال رہے کہ حوثی ملیشیا نے صنعاء یونیورسٹی سمیت ملک کی بعض دوسری جامعات اور تعلیمی اداروں میں جاسوسی کے مذموم مقصد کے لیے طلباء فورم قائم کیے ہیں۔ یہ نام نہاد فورم اساتذہ، طلباء اور انتظامی عملے کی ٹوہ میں لگے رہتا ہے اوران کی سرگرمیوں اور میلانات پر نظر رکھتا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ حوثی فورم اور اپنی سرگرمیوں کے ذریعے خفیہ،مشکوک اور خطرناک خفیہ انٹلی جنس سروس کویونیورسٹی میں ہونیوالی سرگرمیوں کے میں خبر دیتی اور درسگاہوں میں فرقہ واریت کے فروغ میں پیش پیش ہے۔

 ذرائع کا کہنا تھا کہ بہ ظاہر یہ گروپ طلباء کے مفادات کے دفاع کی آڑ میں کام کرتا ہے مگر در پردہ وہ طلباء اور اساتذہ کی سرگرمیوں پر نظر رکھنے اور ان کے بارے میں حوثی انٹیلی جنس کو معلومات فراہم کرتا ہے۔

مزید : عالمی منظر /رائے