یہودی ایجنٹ اسلامی قوتوں کا راستہ روکنے کی کوشش کررہے ہیں، ساجد میر

  یہودی ایجنٹ اسلامی قوتوں کا راستہ روکنے کی کوشش کررہے ہیں، ساجد میر

  



شیخوپورہ(آن لائن)مرکزی جمعیت اہلحدیث پاکستان کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے کہا ہے کہ ایک گہری عالمی سازش کے تحت یہود و ہنود کے ایجنٹ اسلامی قوتوں کا راستہ روکنے کی کوشش کررہے ہیں اس ضمن میں مسلم ممالک میں شورش اور فرقہ واریت کی بنیاد پر اختلافات کو ہوا دینے کی کوشش کی جارہی ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے جناح گارڈن میں دعوت اہلحدیث و تحفظ ختم نبوت کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر مناظر اسلام حافظ عبدالرحمن شیخوپوری، قاری محمد حنیف ربانی، مولانا سید سبطین شاہ نقوی، قاری عبدالحفیظ فیصل آباد، قاری محمد بنیامین عابد اوکاڑوی، مولانا محمد نواز چیمہ، قاری عبدالسلام عزیزی، پروفیسر حافظ عثمان خالد شیخوپوری،شیخ الحدیث قاری انصر محمود، مولانا محمد عبداللہ ساجد سمیت دیگر علماء کرام موجود تھے۔انہوں نے کہا کہ امریکہ اور اس کے اتحادی پاکستان سے لیکر افغانستان سمیت مسلم امہ میں نفرت کے بیج بو کر آپس میں لڑانے اور مسلمانوں کی قوت کو تقسیم کرنے کی بھی کوششیں کررہے ہیں اور اس کیلئے قادیانیوں کو بھی استعمال کیا جارہا ہے بالخصوص عقیدہ ختم نبوت پر آئے روز حملے بھی اسی سازش کا حصہ ہیں قرآن پاک کی بے حرمتی کے حالیہ واقعہ سے بین المذاہب تصادم کے خطرات بڑھ گئے ہیں جبکہ اسلام مکالمہ بازی اور علمی استدلال کے ساتھ بات چیت کا درس دیتا ہے، پاکستان عالم اسلام کا مضبوط قلعہ ہے جس کی بنیاد کلمہ طیبہ کی بنیاد پر رکھی گئی تھی مگر افسوس 72برس گزر جانے کے باوجود یہاں اسلام کا نفاذ نہ ہوسکا جس کی وجہ سے آج ہم نت نئے مسائل اور مشکلات کا شکار ہیں جسے موجودہ حکومت بھی قابو پانے میں ناکام ہوئی ہے،، سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے کہا کہ موجودہ حکومت نے پاکستان کو ریاست مدینہ بنانے کا اعلان محض سیاسی مقاصد کیلئے کیا ہے 14ماہ گزر جانے کے بعد بھی ان کے اقدامات سے ریاست مدینہ نہیں بلکہ امریکی ریاست ضرور بنتی دکھائی دی۔

ساجد میر

مزید : صفحہ آخر