سپریم کورٹ کا رجسٹرار درخواست لے کر اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچ گیا

سپریم کورٹ کا رجسٹرار درخواست لے کر اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچ گیا
سپریم کورٹ کا رجسٹرار درخواست لے کر اسلام آباد ہائیکورٹ پہنچ گیا

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) سپریم کورٹ کے رجسٹرار کی معلومات فراہمی کے فیصلے کے خلاف دائر درخواست کے قابل سماعت ہونے پر اسلام آباد ہائیکورت نے اٹارنی جنرل کو معاونت کیلئے طلب کرلیا۔

سپریم کورٹ کے ملازمین کی بھرتیوں کی معلومات شہری کو فراہم کرنے کے انفارمیشن کمیشن  کے فیصلے کیخلاف رجسٹرار سپریم کور ٹ نے اسلام آباد ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی ، درخواست کی سماعت چیف جسٹس اطہر من اللہ نےکی ، چیف جسٹس نے سوال اٹھایا کہ کیا رجسٹرار سپریم کورٹ  کی درخواست ہائیکورٹ سن سکتی ہے ؟۔عدالت نے درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے سے متعلق معاونت کیلئے اٹارنی جنرل کو طلب کرلیا ۔ 

دوران سماعت ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے کہا کہ 12 جولائی  2021  کو  انفارمیشن کمیشن نے معلومات فراہم کرنے کا حکم دیا۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے استفسار کیا کہ انفارمیشن کمیشن نے یہ فیصلہ کس قانون کے تحت دیا،  ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے بتایا کہ انفارمیشن کمیشن نے فیصلہ معلومات تک رسائی کے قانون کے تحت دیا۔ چیف جسٹس نے  ریمارکس دیے کہ یہ سارا معاملہ فرسٹ امپریشن کا ہے، دیکھنا ہے درخواست قابل سماعت بھی ہے یا نہیں۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ اسلام آباد ہائی کورٹ کے پاس رجسٹرار سپریم کورٹ کے خلاف رٹ جاری کرنے کا اختیار نہیں،  کیا رجسٹرار سپریم کورٹ براہ راست اس ہائیکورٹ سے رجوع کر سکتے ہیں؟اسلام آباد ہائی کورٹ جو بھی فیصلہ کرتی ہے وہ کہاں چیلنج کیا جا سکے گا؟ 

مزید :

اہم خبریں -قومی -