سردار تنویر الیاس کا طوفانی دورہ نیلم ، عوامی حلقوں کا ایسا ردعمل کہ وزیراعظم عمران خان بھی خوشی سے کھل اٹھیں  

سردار تنویر الیاس کا طوفانی دورہ نیلم ، عوامی حلقوں کا ایسا ردعمل کہ ...
سردار تنویر الیاس کا طوفانی دورہ نیلم ، عوامی حلقوں کا ایسا ردعمل کہ وزیراعظم عمران خان بھی خوشی سے کھل اٹھیں  
سورس: File Photo

  

مظفرآباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)آزاد کشمیر میں حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی)کے صدر اور موسٹ سینئر وزیر سردار تنویر الیاس خان کی طرف سے،ٹورازم ٹیکس،عمارتوں  کی تعمیرات کے لیئے بلڈنگ کوڈز کے اطلاق،سوریج کی منصو بہ بندی،سیاحتی مقامات کی صفائی کے  لیئے محکموں کو جاری کردہ احکامات کی بھر پور پذیرائی،عوامی حلقوں کی طرف سے  خیر مقدم، اقدامات وزیراعظم پاکستان عمران خان کے وژن،وزیر اعظم سردار عبد القیوم نیازی اور پی ٹی آئی آزاد کشمیر کی حکومت کا گڈ گورننس کی جانب احسن قدم قرار، احکامات پر عملدرآمد سے حکومت کی نیک نامی میں اضافہ ہو گا،عوامی حلقوں کا رد عمل۔

تفصیلات کے مطابق حال ہی میں سینئر موسٹ وزیر سردار  تنویر الیاس خان نے اپنے دورہ نیلم کے موقع پر تعمیر و ترقی کے حوالے سے جہاں تعمیر و ترقی کے  اہم منصوبوں کے اعلانات کئےتھےوہاں پرسینئر موسٹ وزیر حکومت نےعمارات کی تعمیراتی پلاننگ،اربنائزیشن سمیت کئی اہم امور پر ضلعی انتظامیہ اور محکمہ جات کو ہدایات جاری کی تھی ،سینئر وزیرنےکہاتھاکہ نیلم میں گیسٹ ہاؤسز کی مشروم گروتھ ہورہی ہےلیکن ان سےحاصل کی جانےوالی آمدن سےحکومت کوٹیکس نہیں دیاجارہا،ٹیکس کی ادائیگی کویقینی بنانےکے لیے محکمہ سیاحت مظفرآباد کے ہیڈآفس میں شعبہ ویجیلنس قائم کیا جائے گا،شادرہ میں بنائی گئی عمارتوں کو ریگوالرائزڈ کریں گے،اس حوالے سے جلد بائی لاز لائے جائیں گے ۔ نیلم کے سیاحتی مقامات پرنئی کمرشل عمارات اورگھروں کی تعمیرپرپابندی ہے،آئندہ تمام عمارات بلڈنگ کوڈکےتحت بنیں گی، جس کےلیےنیلم ڈویلپمنٹ بورڈ فی الفور ایک آرکیٹکٹ ،ایک بلڈنگ انجئیر اور ایک گریجویٹ ٹاؤن پلانرتعینات کرے ،آئندہ بورڈ کی منظوری کے بغیر کوئی عمارت تعمیر نہ ہوگی، نیلم کے گھروں اور کمرشل عمارات کے نقشے نیلم ڈویلپمنٹ بورڈ تیار کرے گا ۔

  انہوں نے مزید کہا تھا کہ حکومت کے کسی بھی محکمے کا کوئی انسپکٹر نیلم میں لوگوں کو بے جاتنگ نہیں کرے گا اگر کوئی آفیسر ایساکرتے ہوئے پکڑا گیا،تو فوراََ برخاست ہوگا ۔ سینئر وزیر کامزید کہنا تھا کہ ضلع نیلم کے اندر دریا میں سیوریج ڈالنے والے ایک ماہ میں سیوریج کا متبادل بندوبست کریں ، نیلم میں وال چاکنگ ، شاپر بیگ باہرپھینکنے پر پابندی عائد ہوگی ایسا کرتے پکڑے جانے والے فرد کو پہلی بار پانچ ہزار جرمانہ ہوگا ، دوسری بار 15ہزار جرمانہ ہوگا جبکہ تیسری بار پکڑ ا گیا تو تین ماہ کے لیے حوالات میں بند ہوگا ۔

سینئرموسٹ وزیر کے ان احکامات کے  بعدآزادکشمیرکے کا ہر خاص و عام شہریوں بے بھر پور پذیرائی دی اور اسے حکومت کی نیک نامی اور گڈ گور ننس کے لیئے خوش آئند قرار دیا ہے۔

مزید :

علاقائی -آزاد کشمیر -مظفرآباد -