مصر‘ عدالت نے حماس پر پابندی عائد کردی ٗ دہشتگرد تنظیم قرار دیدیا گیا

مصر‘ عدالت نے حماس پر پابندی عائد کردی ٗ دہشتگرد تنظیم قرار دیدیا گیا

  

قاہرہ(این این آئی) مصر کی ایک عدالت نے فلسطین کی اسلامی عسکریت پسند تنظیم حماس پر پابندی عائد کرتے ہوئے اسے ایک دہشت گرد تنظیم قرار دیدیا ۔میڈیا رپورٹ کے مطابق مصر کے سابق صدر محمد مرسی کی 2013 میں معزولی کے بعد مصر کے سرکاری حکام نے حماس کو سینائی میں ہونے والے حملوں کا ذمہ دارٹھہرایا تھا۔مصر میں عدالتی حکام کے مطابق وکیل کی جانب سے یہ موقف اختیار کی گیا کہ حماس ایک عسکریت پسند تنظیم ہے جو غزہ سے منسلک مصر کے علاقے سینائی میں دہشت گرد حملوں میں ملوث ہے۔وکیل کی جانب سے یہ بھی الزام عائد کیا گیا تھا کہ حماس نے غزہ اور مصر کے علاقے میں سرنگیں کھود رکھی ہے جن سے اسلحہ اسمگل کرکے پولیس اور فوجیوں پر حملے کئے جاتے ہیں۔مصری فوج کے مطابق صدر مرسی کے اقتدار کے خاتمے کے بعد سے اب تک انھوں نے ایسی 1600 سرنگے ختم کی ہیں۔عدلت نے اپنے حکم نامے میں شامل کیا کہ عدالت کو دی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ مذکورہ تنظیم نے حملے کئے ہیں اور ان حملوں میں فوج، مصر کی پولیس اور ان کے ہمدردوں کو نشانہ بنایا گیا ہے\'۔عدالت کے مذکورہ حکم کے حوالے سے القسام بریگیڈ کی جانب سے کسی قسم کا کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے تاہم حماس کے ترجمان نے غزہ سے جاری ایک بیان میں کہا کہ ان کی تنظیم نے مصر کے داخلی معاملات میں کبھی مداخلت نہیں کی ہے

مزید :

عالمی منظر -