سانحہ پشاور کے شہیدں کو نشان حیدر دیا جائے ، شہداءفورم کی دہشت گردوں کو گرفتار کرنے کے لیے 48 گھنٹے کی مہلت

سانحہ پشاور کے شہیدں کو نشان حیدر دیا جائے ، شہداءفورم کی دہشت گردوں کو ...
سانحہ پشاور کے شہیدں کو نشان حیدر دیا جائے ، شہداءفورم کی دہشت گردوں کو گرفتار کرنے کے لیے 48 گھنٹے کی مہلت

  

پشاور ( مانیٹرنگ ڈیسک ) سانحہ پشاور میں شہید ہونے والے بچوں کے والدین کی جانب سے قائم شہداءفورم نے حکومت کو پشاور سکول پر حملہ کرنے والوں کو گرفتار کرنے کے لیے حکومت کو 48 گھنٹے کی مہلت دے دی۔تفصیلات کے مطابق سانحہ پشاور کے بعد قائم ہونے والے شہداءفورم کے اراکین نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کہ پشاور سکول پر حملہ کرنے والے تاحال قانون کی گرفت میں نہیں آ سکے ۔حکومت ان کو آئندہ 48 گھنٹوں میں گرفتار کر لے ورنہ شہداءفورم کی جانب سے شدید احتجاج کیا جائے گا۔شہداءفورم کے اراکین نے مطالبہ کیا کہ سانحہ پشاور کے شہداءکو نشان حیدر سمیت اعزازات ملنے چاہیئے ۔حکومت والدیں کو محض عمرہ پیکج دے کر لالی پاپ دینے کی کوشش نہ کرے۔

سینٹ میں بدعنوانی کیخلاف بل اتفاق رائے سے منظور،10 ماہ گزرنے کے باوجود سکیورٹی پالیسی پر بات نہیں ہوئی : فرحت اللہ بابر

اراکین کا کہنا تھا کہ اگر سانحے سے قبل وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کے پاس معلومات تھیں تو انہوں نے کوئی ایکشن کیوں نہیں لیا ؟اس سنگین غفلت برتنے پر وزیر داخلہ کو مستعفی ہو جانا چاہیئے۔جبکہ خیبر پختونخواہ حکومت کے حوالے سے اراکین شہداءفورم کا کہنا تھا کہ عمران خان نے 16 دنوں میں تحقیقات کروانے کا اعلان کیا تھا لیکن ابھی تک کوئی تحقیقات نہیں کروائی گئیں ۔انہوں نے مزید کہا کہ ہم خیبر پختونخواہ حکومت کو نہیں مانتے اور مطالبہ کرتے ہیں کہ تحریک انصاف صوبے میں اپنی حکومت چھوڑ دے اور فوری مستعفی ہو جائے۔تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان پر تنقید کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے انتخابی دھاندلی پر اتنا عرصہ دھرنا دیا ہے جبکہ اصل دھرنا سانحہ پشاور کے شہداءکے لیے ہونا چاہیئے تھا ۔شہداءفورم نے کل صبح 11 بجے ریلی نکالنے کا اعلان بھی کیا ہے جبکہ انہوں نے شہداءکے درمندوں سے اپیل بھی کی ہے کہ وہ اس ریلی میںشریک ہو کر ان کا ساتھ دیں۔

مزید :

پشاور -اہم خبریں -