جیو سے مقدمہ ہارنے کے بعد اے آروائے کے 6 چینلز کی برطانیہ میں نشریات معطل

جیو سے مقدمہ ہارنے کے بعد اے آروائے کے 6 چینلز کی برطانیہ میں نشریات معطل
جیو سے مقدمہ ہارنے کے بعد اے آروائے کے 6 چینلز کی برطانیہ میں نشریات معطل

  

لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن) اے آروائے نیٹ ورک کے6 چینلز اے آروائے ڈیجیٹل ، اے آر وائے نیوز، اے آر وائے کیو ٹی وی ، اے آر وائے ورلڈ نیوز، کیو ٹی وی اسلامک ایجوکیشن چینل اور ارے آر وائے انٹر ٹینمنٹ کی برطانیہ میں نشریات بند کرتے ہوئے ان کے لائسنس منسوخ کردیے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جیو نیوز کے خلاف ہرجانے کا کیس ہارنے کے بعد برطانوی عدالت نے اے آروائے نیٹ ورک کو بھاری جرمانہ عائد کیا تھا ، جس کے بعد اے آروائے گروپ کے6 چینلز کے ٹیلی ویژن لائسنس ایبل کونٹینٹ سروس (ٹی ایل سی ایس) معطل کردیے گئے تھے لیکن اس کے باوجود نشریات جاری رہنے پر انہیں سکائی نیٹ کی ای پی جی سے ہٹا دیا گیا ہے ۔

برطانوی میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی آف کام کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ اتھارٹی نے 27 جنوری کو اس بات کا مشاہدہ کیا ہے کہ اے آر وائے نیٹ ورک کے یہ 6 چینلز سروسز فراہم کرنے میں ناکام ہوچکے ہیں اس لیے ان کے لائسنس منسوخ کیے جاتے ہیں۔ اے آر وائے نیٹ ورک نے 31 دسمبر 2016 کو اپنا کام بند کردیا تھا جبکہ 12 جنوری 2017 کو عدالت میں دیوالیہ ہونے کی درخواست دائر کی تھی ،کاروبار بند ہونے کے باوجود اے آر وائے ڈیجیٹل ، کیو ٹی وی اور اے آروائے نیوز کے پروگرام باقاعدہ نشر ہو رہے تھے جبکہ دیگرتین چینلز کے آپریشن معطل تھے اس لیے شنوائی کا پورا موقع دینے کے بعد لائسنس منسوخی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ جیو سے مقدمہ ہارنے کے بعد لندن آفس بند، اے آروائے انتظامیہ نے دیوالیہ قرار دینے کیلئے درخواست دائر کردی

واضح رہے کہ اے آروائے نیوز انتظامیہ کو جیو نیوز کے مالک میر شکیل الرحمان کی جانب سے دائر کیے گئے مقدمے میں 1 لاکھ 85 ہزار پاﺅنڈ کا جرمانہ کیا گیا تھا ۔ جرمانے کے علاوہ مجموعی اخراجات ڈال کر اے آر وائے نیوز کو یہ مقدمہ 30 لاکھ پاﺅنڈ میں پڑا تھا۔ کچھ روز پہلے اے آروائے گروپ نے اپنا لندن کا دفتر بند کردیا تھا اور عدالت کے روبرو اپنے دیوالیہ ہونے کے کاغذات جمع کرائے تھے ۔

مزید : برطانیہ /اہم خبریں