چوآسیدن شاہ،ویٹرنری ڈاکٹر کی غفلت لاپرواہی کانوٹس لیا جائے،کسان طاہرایوب

چوآسیدن شاہ،ویٹرنری ڈاکٹر کی غفلت لاپرواہی کانوٹس لیا جائے،کسان طاہرایوب

چوآسیدن شاہ (نمائندہ پاکستان)چوآسیدن شاہ میں ویٹنری ڈاکٹر کی غفلت اور لا پرواہی کی وجہ سے لاکھوں روپے مالیت کی گائے کی بچھڑی حالت غیر ہوگئی کسان کی ہال دوہائی وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف سے نوٹس لینے کا مطالبہ تفصیلات کے مطابق چوآسیدن شاہ کے رہائشی کسان طاہر ایوب ولد محمد ایوب سکنہ محلہ وڈاراہ نے اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ میں نے بچھڑی کے سینگ ختم کروانے کے لئے کئی دفعہ ویٹنری ہسپتال چوآسیدن شاہ گیا اور عرصہ داراز سے برجمان ویٹنری ڈاکٹر غوری نے پہلے تو بات ہی نہیں سنی اور پھر میرے اصرار پر کہا کہ میں تو ڈائریکٹر ہو گیا اور دوسرے بندے سے جو ان کوالیفائیڈ آدمی تھا اُسے دوائی لگانے کو کہا جس نے سینگ والی جگہ کی بجائے بچھڑی کے پورے منہ پر دوائی ڈال دی جس سے بچھڑی کا سارا منہ جل گیا ہے اور وہ شدید بیمار ہے میرے بتانے پر بھی ڈاکٹر غوری اُسے چیک نہیں کیا اُس نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف، چیف سیکرٹری پنجاب ،کمشنر روالپنڈی ڈویثزن ،ڈی سی چکوال عمر جہانگیر خان ، اور اسسٹنٹ کمشنر چوآسیدن شاہ چوہدری علی بٹر سے مطالبہ کیا ہے کہ ایسی کالی بھیڑوں کا محکمہ سے فوری نکالا جائے اور اگر میرا کوئی بڑا نقصان ہوا تو اُس کی تمام ذمہ داری ڈاکٹر غوری اور محکمہ ویٹنری پر عائد ہوگی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر