فلم پدماوت دیکھنے گئی نوجوان لڑکی کے ساتھ سینما میں جنسی زیادتی، کسی نے بھی مدد نہ کی کیونکہ۔۔۔

فلم پدماوت دیکھنے گئی نوجوان لڑکی کے ساتھ سینما میں جنسی زیادتی، کسی نے بھی ...
فلم پدماوت دیکھنے گئی نوجوان لڑکی کے ساتھ سینما میں جنسی زیادتی، کسی نے بھی مدد نہ کی کیونکہ۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

سکندر آباد (نیوز ڈیسک) بالی وڈ کی تاریخ میں شاید ہی کوئی فلم ’پدماوت‘ سے زیادہ متنازع رہی ہو۔ پہلے تو اس کی وجہ سے پورے بھارت میں ہنگامے اور جلاﺅ گھیراﺅ ہوا اور اب یہ منحوس فلم دیکھنے کے سینما جانے والی ایک لڑکی کی عزت لٹ گئی ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ افسوسناک واقعہ سکندر آباد کے ایک سینما گھر میں پیش آیا جہاں فلم دیکھنے کے دوران ہی ایک نوجوان نے اپنی 19 سالہ گرل فرینڈ کے ساتھ زیادتی کر ڈالی۔

مقامی میڈیا کے مطابق متاثرہ لڑکی اور اس کی عصمت دری کرنے والے نوجوان کی ملاقات فیس بک کے ذریعے ہوئی تھی۔ ملزم کی شناخت 23 سالہ کنڈاکتلا بکشاپاتھی کے نام سے کی گئی ہے۔ اس کا تعلق جنگاﺅن ڈسٹرکٹ سے ہے اور وہ ڈرائیور کے طور پر کام کرتا ہے۔ لڑکی سے اس کی ملاقات دو ماہ قبل فیس بک کے ذریعے ہوئی تھی جبکہ تقریباً 20 دن قبل سکندرآباد ریلوے سٹیشن کے قریب ایک ہوٹل میں ان کی پہلی مختصر ملاقات ہوئی تھی۔

بکشا پاتھی نے لڑکی کو دوبارہ ملاقات کے لئے بلایا اور پدماوت فلم دکھانے کیلئے اسے سکندرآباد کے پرشانت سینما میں لے گیا۔ جب دونوں فلم دیکھ رہے تھے تو آس پاس کی کچھ سیٹیں خالی دیکھ کر بکشاپاتھی نے موقع کا فائدہ اٹھانے کا فیصلہ کیا اور لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ متاثرہ لڑکی کا کہنا ہے کہ اس نے عزت بچانے کے لئے چیخ و پکار کی لیکن کوئی اس کی مدد کو نا آیا۔ بعد ازاں اس کی شکایت پر بکشا پاتھی کو گرفتار کرلیا گیا جبکہ پولیس کا کہنا ہے کہ سینما کی انتظامیہ کے خلاف بھی کارروائی کی جائے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس