سندھ یونیورسٹی جامشور و کے ہاسٹل میں طالبہ نے مبینہ طور پر خود کشی کر لی

سندھ یونیورسٹی جامشور و کے ہاسٹل میں طالبہ نے مبینہ طور پر خود کشی کر لی
سندھ یونیورسٹی جامشور و کے ہاسٹل میں طالبہ نے مبینہ طور پر خود کشی کر لی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

جامشورو(ڈیلی پاکستان آن لائن) سندھ یونیورسٹی جامشوروکے ہاسٹل میں 22سالہ طالبہ نے مبینہ طور پر پھندا لے کرخود کشی کر لی ہے، طالبہ قمبر کی رہائشی تھی۔

تفصیلات کے مطابق سندھ یونیورسٹی جامشورو کی 22سالہ طالبہ مبینہ طور پر زندگی سے روٹھ گئی اور پھندے سے لٹک کر زندگی کا خاتمہ کر لیا ،خودکشی کی اطلاع موصول ہونے پر پولیس موقع پر پہنچ گئی ۔پولیس نے لاش کو پھندے سے اتارا اور کمرے کی تلاشی لینے پر شناختی دستاویزات سے معلوم ہوا کہ جاں بحق ہونیوالی لڑکی کا نام نائلہ اور تعلق قمبر شہر کے قریب گوٹھ رند سے ہے۔پولیس نے مقدمہ درج کرکے لاش کو اپنی تحویل میں لیتے ہوئے پوسٹ مارٹم کیلئے ہسپتال منتقل کردیاہے۔

پولیس حکام کاکہنا ہے کہ فرانزک ٹیم نے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کرنے کے بعد تجزیے کیلئے لیبارٹری روانہ کردئیے ہیں،تاہم واقعہ  خود کشی ہے یا  طالبہ کو قتل کیاگیاہے ؟ کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا،واقعہ کی تحقیقات جاری ہیں۔

مزید : جامشورو