جنوبی پنجاب میں دھند جاری ‘ نئے سال کا پہلا سورج دھندلکوں میں گم رہا

جنوبی پنجاب میں دھند جاری ‘ نئے سال کا پہلا سورج دھندلکوں میں گم رہا

وہاڑی ‘ میلسی ‘ لودھراں ‘ ڈاہرانوالہ ‘ہیڈ راجکاں ‘ منڈی یزمان ( نمائندگان ) جنوبی پنجاب کے مختلف شہروں میں دھند پڑنے کا سلسلہ دوسرے روز بھی جاری رہا جس کے نتیجہ میں سردی(بقیہ نمبر46صفحہ7پر )

کی شدت میں اضافہ ہونے کے علاوہ کوئلے اور لکڑی کے نرخ بھی بڑھ گئے ۔ وہاڑی سے بیورو رپورٹ ‘ نامہ نگار کے مطابق شہر اور گردو نواح میں دھند کا دوسرے روز بھی راج جاری رہا جس کی وجہ سے حدنگاہ صفر اور ٹریفک حادثات میں اضافہ ہونے لگا ، مسافروں کو سفرکرنے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑا جبکہ گنے سے لوڈ ٹرالر کی وجہ سے روڈ پر ٹریفک کی روانی بری طرح متا ثر ہو تی رہی جس پر عوامی وسماجی اور شہری حلقوں ، مسافروں ابرار علی ، راجہ اہد، ظفر اقبال بگو ، وارث علی چوراہی ، ایم افضل ملک ، چودھری اختر ، شاہداقبال ، محمد رمضان اور رانا محمداجمل ودیگر نے احتجاج کرتے ہوئے کہاکہ پٹرولنگ پولیس یا سلو مو ونگ گاڑیوں پر ریفلکٹر لگانے کے لیے ٹریفک پولیس کی طرف سے کیے گئے اقدامات غیر موثر نظر آئے انہوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے نو ٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ میلسی سے نامہ نگار ‘ نمائندہ پاکستان کے مطابق میلسی اور گردونواح میں شدید دھند چھائی رہی جہاں شہریوں کو شدید مسائل کا سامنا رہا وہاں وہ 2017ء کے پہلے طلوع آفتاب کے منظر کو دیکھنے سے بھی محروم رہے۔صبح اور رات کے اوقات میں شدید دھند کے باعث حد دو فٹ تک محدود رہی۔ دن میں بھی سورج کی دھوپ سے بھی لوگ محروم رہے۔ لودھراں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق لودھراں اور گردونواح میں سردی کی شدید لہر۔ دھندنے سورج کو چھپائے رکھا۔ سردی کی شدت میں اضافہ کے ساتھ ہی کوئلہ اورلکڑی کے نرخ بڑھ گئے ۔ لوگ سردی سے بچنے کیلئے گھروں میں دبک کر رہ گئے ۔ جس کی وجہ سے کاروبارزندگی شدید متاثرہوا جبکہ گرم کپڑے فروخت کرنے والے لنڈا بازار کی رونقیں بحال ہوگئیں۔ اورلنڈابازاروالوں نے سردی کو دیکھ کر دام بڑھادیئے۔ ڈاہرانوالہ سے نامہ نگار کے مطابق ڈاہرانوالہ اور اسکے گردونواح کے علاقے گرد آلود موسم اور شدید دھند کی لپیٹ میں ہیں۔گزشتہ تین روز سے سورج کی کرنیں زمین پر نہیں پڑ رہیں۔ڈاہرانوالہ کے لوگ سال گزشتہ کے آخری سورج کو الوداع بھی نہ کر سکے اور نہ ہی نئے سورج کا دیدار کر سکے۔لوگوں کی نئے سال کے پہلے سورج کے ساتھ سیلفیاں لینے کا شوق ادھورے کا ادھورا رہ گیا۔ڈاہرانوالہ کے شہری نئے سال کے پہلے مہینے یعنی جنوری میں بارشوں کے لیے پر امید ہیں تاکہ بارشوں سے فضا صاف ہو اور بیماریوں کا خاتمہ ہوسکے۔ ہیڈ راجکاں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق سال2017کی پہلی صبح ہیڈراجکاں اور نواح میں شدیددھند کاراج ہے ۔ گزشتہ روز سے لے کر اب تک سورج نہیں نکلا۔جسکی وجہ سے سردی کی شدت میں بہت اضافہ ہوگیا۔شدید دھندکی وجہ سے حدنگاہ صفرہو گئی ہے اور بجلی کی بندش اور لوڈ شیڈنگ میں اضافہ ہوگیا ہے ۔محکمہ موسمیات کے مطابق یہ سلسلہ مزید چندروزتک چلنے کا امکان ہے ۔ دھند کی وجہ سے گندم کی فصل پرتو مثبت اثرات مرتب ہو رہے ہیں جبکہ باغات اور سبزیوں پرمنفی اثرات ظاہر ہو ہے ہیں۔ منڈی یزمان سے نامہ نگار کے مطابق سا ل تو 2017کے پہلے دن تحصیل بھر میں دھند کا را ج۔دھند اس قدر گہر ی تھی کہ حد نگاہ صفر ہو کر رہ گئی ۔گا ڑیو ں کی دن کے وقت بھی لا ئٹس جلا نا پڑ یں ۔جب کہ بین الا ضلا عی ٹر یفک دن بھر معطل رہی ۔دھند کی وجہ سے تمام معمو لات زند گی بر ی طر ح متا ثر ہو کر رہ گئے ۔

دھند

مزید : ملتان صفحہ آخر