ویلج کونسل صوابی میرا کا تاریخی سکول طلباء کی تعداد کم ہونے کی وجہ سے بند کر دیا گیا

ویلج کونسل صوابی میرا کا تاریخی سکول طلباء کی تعداد کم ہونے کی وجہ سے بند کر ...

ہری پور ( نامہ نگار)ویلج کونسل صوابی میرا کا تاریخی سکول طلباء کی تعداد کم ہونے کی وجہ سے بند کر دیا گیا۔سکول میں کلاسوں کا اجرا 1927میں شروع ہوا تھا اور اس کی عمارت 1985 میں امین خان ایڈووکیٹ بدھوڑہ کی خصوصی کاوشوں سے عمل میں لائی گئی تھی ۔ گورنمنٹ پرائمری سکول میرا سے ہزاروں طلباء و طالبات نے تعلیم حاصل کی اور اعلی سرکاری عہدوں پر فائز ہوئے ۔ محکمہ تعلیم کی عدم دلچسپی کے باعث کے عوام علاقہ نے اپنے بچوں کو پرائیوٹ سکول میں داخل کروا دیا ہے جس وجہ سے سکول میں طلباء کی تعداد کم ہو کر 16 رہ گئی تھی ۔محکمہ تعلیم کے سرکل پھرہالہ کے انچارج کاکا ذولفقار نے گورنمنٹ پرائمری سکول میرا میں تعینات اساتذہ کو گورنمنٹ پرائمری سکول بانڈہ مانسہریاں اور گورنمنٹ پرائمری سکول دروازہ میں ڈیوٹی کرنے کے احکامات جاری کر دئیے ہیں ۔ 2005-6 سے قبل کے داخلہ خارج رجسٹرڈ بتاتے ہیں کہ اس تاریخی سکول میں 350 سے زاہد طلباء ایک سال میں داخل تھے۔ محکمہ تعلیم خیبر پختونخواہ میں انقلابی اقدامات کرنے اور تعلیم پر فوکس کرنے کا راگ تو الاپ رہا ہے مگر بند ہونے والے سکول میں تاحال بجلی اور طلباء کے لئے لیٹرین کی سہولت موجود نہیں ہے ۔ ویلج کونسل کے منتخب بلدیاتی نمائندوں کے اپنے بچے بھی سرکاری سکول کے بجائے پرائیوٹ سکولوں میں زیر تعلیم ہیں ۔ جس وجہ سے منتخب بلدیاتی نمائندے اور دیگر سرکاری سکول کے معاملات میں دلچسپی نہیں لے رہے ۔ ویلج کونسل صوابی میرا کے تاریخی سکول کا تعداد کی کمی کی وجہ سے بند ہوجانامنتخب بلدیاتی نمائندوں کی بے حسی اور نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے ۔

Back to Conversion Tool

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر