بھارتی سپریم کورٹ کا بی سی سی آئی کے صدر انوراک ٹھاکر اور سیکرٹری کو عہدے سے ہٹانے کا حکم

بھارتی سپریم کورٹ کا بی سی سی آئی کے صدر انوراک ٹھاکر اور سیکرٹری کو عہدے سے ...
بھارتی سپریم کورٹ کا بی سی سی آئی کے صدر انوراک ٹھاکر اور سیکرٹری کو عہدے سے ہٹانے کا حکم

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی سپریم کورٹ نے بی سی سی آئی کے صدر انوراگ ٹھاکر کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا ہے اور کہا ہے کہ لودھا کمیٹی کی سفارشات پر عملدرآمد نہ کرنے والے تمام بورڈ حکام کو جانا ہو گا۔ سپریم کورٹ نے بھارتی کرکٹ بورڈ کے سیکرٹری اجے شرکے کو بھی ان کے عہدے سے ہٹا دیا ہے۔

میاں بیوی نے 17بچے پیدا کر ڈالے، بالآخر ستارہویں بچے پر پورا گاﺅں اکٹھا ہوکر ان کے گھر پہنچ گیا اور ایسا مطالبہ کردیا کہ جان کر آپ کی بھی ہنسی نہ رکے

سپریم کورٹ نے اپنے حکم میں کہا ہے کہ لودھا کمیٹی کی تمام سفارشات پر عملدرآمد ضرور کرنا ہو گا اور اس کا مطلب ہے کہ کرکٹ بورڈ میں 70 سال یا اس سے زائد تمام عہدیداروں استعفیٰ دینا ہو گا۔ واضح رہے کہ انڈین پریمئر لیگ میں جوئے کا سکینڈل منظرعام پر آنے کے بعد سپریم کورٹ نے لودھا کمیٹی قائم کی تھی۔

’اگر میاں بیوی آپس میں یہ کام کریں تو نکاح ٹوٹ جاتا ہے‘ وہ فتویٰ جس نے اسلامی دنیا میں ہنگامہ برپا کردیا

کمیٹی نے بھارتی کرکٹ بورڈ کو چلانے اور اس کے کام کرنے کے طریقہ کار کو تبدیل کرنے کیلئے کئی سفارشات دی تھیں جبکہ یہ شکایت بھی کی تھی کہ کرکٹ بورڈ نے اس کی سفارشات پر عملدرآمد سے انکار کر دیا ہے۔

مزید : کھیل /اہم خبریں