شہباز شریف ہسپتال‘ ایمرجنسی میں تعینات عملے کا مریضوں سے ناروا سلوک 

شہباز شریف ہسپتال‘ ایمرجنسی میں تعینات عملے کا مریضوں سے ناروا سلوک 

  



ملتان(وقائع نگار)ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ایوننگ شفٹ میں شعبہ ایمرجنسی میں ڈیوٹی پر مامور عملہ ہسپتال میں آنے والے مریضوں کو طبی سہولیات دینے سے انکاری ہونے لگا۔آنے والے مریضوں کو دیگر ہسپتالوں میں ریفر کرکے شٹل کاک بنانا معمول بنا لیا۔تفصیل کے مطابق (بقیہ نمبر44صفحہ7پر)

گزشتہ روز لکڑ منڈی چوک کے 14 سالہ رہائشی محمد ملک نے صحافیوں کو بتایاکہ مجھے ہاتھ پر شدید چوٹ لگی اور ہاتھ سے خون بہنے لگا۔زخمی ہاتھ کو لیکر میں شہباز شریف ہسپتال شام 7بجے پہنچا تو ایوننگ ڈیوٹی پر موجود شعبہ ایمرجنسی کے عملہ نے میرے ہاتھ پر پٹی کرنے اور چیک کرنے کء بجائے چلڈرن ہسپتال جاو ادھر تمہارا چیک اپ نہیں ہو سکتا۔میرے ہاتھ سے زیادہ خون بہہ رہا تھا۔مجھے ڈاکٹر نے علاج معالجہ کی سہولت دینے کی بجائے شٹل کاک بنا دیا۔زیادہ خون بہنے کی وجہ سے میری طبیعت بھی خراب ہوگئی۔اور موقع پر ڈاکٹر اپنے دیگر لیڈی ڈاکٹرز کے ساتھ گپیں اور چائے پیتا رہا۔میرا محکمہ صحت اور ایم ایس شہباز شریف ہسپتال سے مطالبہ ہے کہ عملہ کو علاج کی سہولیات دینے کا پابند کرتے ہوئے تمام تر معاملہ کی انکوائری کرائی جائے۔

سلوک 

مزید : ملتان صفحہ آخر