2011ء سے 50افراد کے کوٹہ کیساتھ ٹاسک مکمل کرنیوالوں کا کوٹہ دو بسوں کا کیا جائے 

  2011ء سے 50افراد کے کوٹہ کیساتھ ٹاسک مکمل کرنیوالوں کا کوٹہ دو بسوں کا کیا ...

  



لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)نئی کمپنیوں کو کوٹہ دینے سے پہلے 2011ء سے50افراد کے کوٹہ کے ساتھ مشکل ٹاسک مکمل کرنے والوں کا کوٹہ کم ازکم دو بسوں کا کیا جائے،2011ء کو سپریم کورٹ کے حکم پر کوٹہ حاصل کرنے والے متحد ہو گئے، 2011ء سے جن کمپنیوں کے خلاف کوئی شکایت نہیں ہے ان کا حق بنتا ہے کہ ان کے کوٹہ میں اضافہ کیا جائے،وزارت مذہبی امور پرائیویٹ حج سکیم کے حوالے سے سزا کے ساتھ جزا کا نظام قائم کیا جائے،صرف سزا دینا پرائیویٹ حج سکیم کے بنیادی فلسفہ کی نفی ہے،سرکاری کی طرح پرائیویٹ حج سکیم کی مشکلات کا ازالہ کرنا وزارت مذہبی امور کی ذمہ داری ہے،50افراد کے کوٹہ والوں نے وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نور الحق قادری اور سیکرٹری میاں مشتاق احمد کی ضیوف الرحمن کے لیے خدمات قابل ستائش قرار دی ہیں،انہوں نے کہا کہ وزارت مذہبی امور کی طرف سے میرٹ کو اپنانا خوش آئند عمل ہے،حج فارمولیشن کمیٹی 50کوٹہ والوں کی مشکلات کو سامنے رکھے،50افرادوالوں کو 2بسوں کی قیمت ادا کرنا پڑتی ہے،45افراد کے لیے 70ہزار ریال دینا پڑتا ہے،5افراد کے لیے بھی بس کا انتظام کرنا پڑتا ہے،وزارت9سال سے وعدہ کر رہی ہے کہ جب کوٹہ بڑھے گا تو 50والوں کا 100ہو گا،دو سال سے کوٹہ بڑھ گیا ہے اب وزارت وعدہ پورا کرے اور کوٹہ بڑھائے۔

کوٹہ

مزید : صفحہ آخر