ٹیکس نیٹ میں آنیوالوں کیخلاف جون تک کوئی کارروائی نہیں کرینگے: مشیر خزانہ

  ٹیکس نیٹ میں آنیوالوں کیخلاف جون تک کوئی کارروائی نہیں کرینگے: مشیر خزانہ

  



اسلام آباد(نیوزایجنسیاں) مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے کہا ہے کہ کاروباری افراد کو ساتھ لے کر چلیں گے ٹیکس نیٹ میں آنے والوں کیخلاف جون تک کوئی کارروائی نہیں کریں گے۔تفصیلات کے مطابق  بدھ کو مشیر خزانہ نے ایف بی آر ہیڈکوارٹرزکا دورہ کیاجہاں ایف بی آر اور ممبر سیلز ٹیکس حامد عتیق سرور کی جانب سے مشیر خزانہ کو ٹیکس وصولی کے اہداف بارے میں بریفنگ دی گئی۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے مشیر خزانہ نے کہا کہ ٹیکس ترمیمی آرڈیننس 2019 ء پر صدر مملکت نے دستخط کر دئیے، کاروباری افراد کو ساتھ لے کر چلیں گے ٹیکس نیٹ میں آنے والوں کیخلاف جون تک کوئی کاروائی نہیں کریں گے،صرف ٹیکس ادا نہ کرنے والوں کو پکڑیں گے۔مشیر خزانہ نے کہا کہ اس وقت تک 186ریٹیلرز پوائنٹ آف سیل سسٹم سے منسلک ہو چکے40 ریٹیلرز کا سسٹم آن لائن ہو گیاصارفین کو فوری طور پر ٹیکس ادائیگی اور ریفنڈ کا نوٹس ملے گا۔دوسری طرف مشیر خزانہ حفیظ شیخ سے چینی سفیر یاؤ جنگ نے ملاقات کی جس میں چینی سفیر نے چینی صدر کے رواں سال کے وسط میں پاکستان کے مجوزہ دورے کے بارے میں آگاہ کیا۔ملاقات کے دوران معیشت،انفرا سٹرکچر اور تحقیق و ترقی کے شعبوں میں جاری منصوبوں پر کام کی رفتار تیز کرنے اور مستقبل میں تعاون کو مزید فروغ دینے پر اتفاق کیا گیا۔مشیر خزانہ نے ہر مشکل گھڑی میں پاکستان کا بھر پور ساتھ دینے پر اور پاکستان کی معاشی و سماجی ترقی میں بھر پور حصہ لینے پر چینی قیادت اور عوام کا شکریہ ادا کیا۔ملاقات کے دوران سی پیک کے جاری منصوبوں پر کام کی رفتار تیز کرنے اور سی پیک کے دوسرے فیز کے تحت پاکستان میں سماجی،ثقافتی اورتحقیق و ترقی کے میدان میں چینی سرمایہ کاری پر تبادلہ خیال کیا گیا۔چینی سفیر نے مشیر خزانہ سے ملاقات کے دوران ملک میں معاشی استحکام لانے اور معیشت کو مضبوط بنیادوں پر استوار کرنے کی حکومتی کوششوں کو سراہا اورچین کے نجی شعبے کی پاکستان میں سرمایہ کاری میں دلچسپی سے آگاہ کیا۔

مشیر خزانہ

مزید : صفحہ اول


loading...