شہر قائد،سخت سردی کے باوجود سرکاری تعلیمی ادارے کھل گئے

شہر قائد،سخت سردی کے باوجود سرکاری تعلیمی ادارے کھل گئے

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)شہر قائد میں موسم سرما کی تعطیلات کے بعد سرکاری ونجی تعلیمی ادارے کھل گئے لیکن سخت سردی کے باعث اسکولوں میں طلبا کی حاضری معمول سے کم رہی تاہم آل پرائیویٹ اسکولز ایسو سی ایشن نے کراچی بھر میں نجی اسکول 6 جنوری تک بند رکھنے کا اعلان کیا ہے جبکہ سیکریٹری تعلیم سندھ چھٹیاں نہ بڑھانے کے اعلان پر قائم ہیں۔تفصیلات کے مطابق کراچی میں خون جمادینے والی سردی میں سرکاری اور نجی اسکول چھٹیوں کے معاملے میں تقسیم ہوگئے ہیں،موسم سرما کی تعطیلات کے بعد اسکول کھل گئے تاہم سخت سردی کے باعث اسکولوں میں حاضری معمول سے کم رہی جب کہ کچھ اسکولوں میں اساتذہ بھی نہیں پہنچے۔اساتذہ نے سیکرٹری تعلیم سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اتنی شدید ٹھنڈ ہے کہ بچوں کے بیمار ہونے کا خدشہ ہے لہذا سیکریٹری تعلیم کو موسم سرما کی تعطیلات میں اضافہ کرنا چاہیے۔دوسری جانب کراچی میں سرد موسم کی شدت میں اضافہ ہوا تو 50 فیصد سے زائد نجی اسکول یکم جنوری کو بند رہے، آل پرائیویٹ اسکولز ایسو سی ایشن کے چیئرمین کے مطابق 6 جنوری تک اسکول بند رکھے جائیں گے جبکہ کئی اسکولوں کی جانب سے پہلے سے والدین کو چھٹیوں سے متعلق آگاہ کر دیا گیا تھا۔نجی اسکول بند رہے اور کھلنے والے سرکاری اسکولوں میں طلبا اور اساتذہ کی تعداد نہ ہونے کے برابر رہی، والدین نے شدید ٹھنڈ میں محکمہ تعلیم کے اسکول کھولنے کے فیصلے کو سمجھ سے بالا تر قرار دیا ہے۔سیکرٹری تعلیم احسن منگی موسم سرما کی تعطیلات میں اضافے کو بے بنیاد قرار دیتے رہے، موسم کی شدت کو دیکھتے ہوئے بیشتر نجی اسکولوں کی انتظامیہ نے 6 جنوری سے اسکول کھولنے کا اعلان کیا ہے۔دوسری جانب حیدر آباد میں بھی موسم سرما کی سرکاری تعطیلات ختم ہونے کے بعد سرکاری ونجی تعلیمی ادارے کھل گئے لیکن شدیدسردی کے باعث تمام ہی تعلیمی اداروں میں طالب علم نہیں پہنچے۔ سرکاری تعلیمی اداروں میں اساتذہ تو موجود ہیں لیکن طالب علم غیرحاضر رہے جب کہ نجی تعلیمی اداروں میں بھی بچے غیرحاضر رہے۔ کئی نجی تعلیمی اداروں نے سردی کے باعث از خود تعطیلات میں اضافہ کردیا۔

مزید : صفحہ اول


loading...